سندھ حکومت کی طرف سے انفیکشس ڈیزیز اسپتال قائم کرنے کی نوید سُنا دی

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ کے مشیر قانون و ترجمان صوبائی حکومت بیرسٹر مرتضی وہاب نے
سندھ حکومت کی طرف سے انفیکشس ڈیزیز اسپتال قائم کرنے کی نوید سُنا دی ہے بیرسٹر مرتضی وہاب نے اپنے ایک ویڈیو بیان میں کہا کہ 400بستروں پر مشتمل انفیکشن ڈیزیز اسپتال کراچی میں جلد ہی فعال ہوجائےگا

یہ پاکستان میں اپنی نوعیت کا پہلاانفکشن ڈیزیز کنٹرول کا ادارہ ہوگا۔ ترجمان سندھ حکومت نے مزید کہا کہ انفیکشن ڈیزیز اسپتال میں کورونا وائرس سے نمٹنے کے لئے اقدامات کئے جائینگے اسکے قیام کے لئے انتظامات شروع کردئیے گئے ہیں انہوں نے کہا کہ پیپلزپارٹی کی سندھ حکومت بلاتفریق انسانیت کی خدمت پر یقین رکھتی ہے کورونا وائرس کی وباء سے نمٹنے کے لیے سندھ حکومت نے پہلے روز سے کئی اقدامات کئے ہیں جنکی تفصیل سے عوام بخوبی آگاہ ہیں مشیر قانون سندھ کا کہنا تھا کہ چند روز سے ہمارے سیاسی مخالفین نے سندھ حکومت کے خلاف پروپیگنڈا مہم شروع کر رکھی ہے جس میں یہ تاثر دینے کی ناکام کوشش کی جارہی ہے کہ سندھ کے اسپتالوں کی حالت خدانخواستہ خراب ہے ناقدین سمجھ لیں ہم پروپیگنڈہ سے گھبرا کر عوامی خدمت کے منصوبے ترک نہیں بلکہ مزید بڑھا رہے ہیں اور وہ یہ بھی جان لیں کہ سندھ واحد صوبہ ہے جہاں کڈنی،لیور کورنیا کا ٹرانسپلانٹ مفت کیاجاتاہے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب نے بتایا کہ سندھ پاکستان کا واحد صوبہ ہے جس نے کارڈیک کیئر سہولیات میں مثال قائم کی ہے بیرسٹر مرتضی وہاب کا کہنا تھا کہ ہمارے ناقدین سندھ حکومت کے اچھے اقدامات کا ذکر کرنے سے نجانے کیوں گھبراتے ہیں شاید انہیں سندھ کی عوام کا احساس نہیں جسکی وجہ سے وہ یہ کرنے سے قاصر ہیں
بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ کراچی کے جناح اسپتال میں سائبر نائف کے زریعے کینسر کا علاج پبلک پرائیوٹ پارٹنرشپ کے تحت مفت کیاجاتاہے جناح اسپتال میں سائبر نائف کے زرئعے کینسر کا علاج صرف سندھ کے شہریوں کا ہی نہیں بلکہ پاکستان بھر سے آنیوالوں کا مفت علاج ہوتا ہے صحت عامہ کےاداروں پر اخراجات سندھ حکومت کرتی ہے اور الحمداللہ مستفید پورا پاکستان ہوتا ہے۔ بیرسٹر مرتضی وہاب نے کہا کہ ہمارے سیاسی مخالفین سندھ حکومت کی تعریف نہیں کرسکتے تو قومی ایمرجنسی کے وقت بے جا تنقید سے بھی گریز کریں ترجمان سندھ حکومت نے کہا کہ آئیے ہمارا ہاتھ تھامیئے تاکہ بلاتفریق انسانی خدمت پر سب چل سکیں اور اس مشکل ترین وقت میں ہم اپنے عوام کو کورونا وائرس سے بچانے میں اپنا کردار ادا کرسکیں۔