بجلی، گیس بل میں کٹوتی صوبائی اختیار نہیں، گورنر نے سندھ حکومت کا ایمرجنسی ریلیف آرڈیننس واپس کردیا

گورنرسندھ عمران اسماعیل نے کورونا ایمرجنسی ریلیف آرڈیننس پر اعتراض اٹھاتے ہوئے اسے سندھ حکومت کو واپس بھیج دیا۔

گورنر نے اپنے اعتراضات میں کہ ہے کہ بجلی،گیس بل میں کمی اور کٹوتی یا رعایت صوبائی حکومت کا دائرہ اختیارنہیں، یہ دائرہ اختیار وفاق کا ہےگورنر ہائوس کے مطابق گورنرسندھ نے ریلیف آرڈیننس پر اپنے تحفظات سے بھی سندھ حکومت کوآگاہ کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق گورنرسندھ عمران اسماعیل نے کوروناایمرجنسی ریلیف آرڈیننس پراعتراضات لگاتے ہوئے ، آرڈیننس کی ذیلی شقوں پر اعتراض کرتے ہوئے کہا ہےکہ بجلی اور گیس بل میں کمی، کٹوتی یا رعایت صوبائی حکومت کا دائرہ اختیارنہیں، یہ دائرہ اختیاروفاق کاہے، بجلی،گیس کے بل میں کمی یارعایت وفاقی حکومت کااختیارہے، بجلی،گیس بل میں رعایت کاوفاقی حکومت پہلے ہی فیصلہ کرچکی ہے۔

عمران اسماعیل نے کہاکہ ہرگزرتے دن کے ساتھ وفاقی حکومت ریلیف کاکام بڑھارہی ہے، آئین کے تحت بجلی،گیس کے معاملات وفاق کے کنٹرول میں ہیں، وفاق ملک بھرکے عوام بشمول سندھ میں ریلیف فراہم کررہاہے۔

وفاقی حکومت کی ریلیف سرگرمیوں کادائرہ بڑھایاجارہاہے، حکومت کسی خوف،امتیازی سلوک کے بغیر ریلیف کا کام جاری رکھے گی۔

انہوں نے کہاکہ آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی آرڈیننس 2002 کے تحت گیس بھی وفاقی معاملہ ہے۔

یاد رہے سندھ کابینہ نے کچھ روز قبل کوروناوائر س ریلف آرڈیننس کی منظوری دے کر اسے گورنر کے پاس بھیجا تھا

Courtesy jang urdu