فکسنگ میں ملوث کرکٹرز کو پھانسی دینے کا مطالبہ

کراچی: قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان اور عظیم بیٹسمین جاوید میانداد نے فکسنگ میں ملوث کرکٹرز کو پھانسی دینے کا مطالبہ کردیا۔

تفصیلات کے مطابق قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان جاوید میانداد نے کہا کہ ایک قانون بنایا جائے اور فکسنگ کا جرم کرنے والے کرکٹرز کو پھانسی دی جائے، ان کا کہنا تھا کہ کھلاڑی کے ساتھ بکیز کو بھی پھانسی دی جائے۔

جاوید میانداد نے کہا کہ ماضی میں کرکٹرز نے چند پیسوں کے لیے ملک کو بیچا، کوچنگ اس لیے چھوڑی تھی کہ مجھے اندازہ ہوگیا تھا کہ فکسنگ ہورہی ہے
سابق کپتان نے کہا کہ جسٹس قیوم کمیشن کو فکسنگ سے متعلق سب کچھ بتایا لیکن کھلاڑی بچ نکلے، کرکٹرز کمزور قوانین کی وجہ سے بچ جاتے ہیں، پاکستان کرکٹ بورڈ دعوؤں سے نکل کر اب عملدرآمد کرے۔

جاوید میانداد نے کہا کہ جسٹس قیوم کمیشن نے جن کرکٹرز کو پی سی بی سے دور رکھنے کا کہا آج بھی وہ بورڈ سے جڑے ہوئے ہیں، جن سابق کرکٹرز پر تھوڑا سا بھی شک تھا، انہیں کرکٹ بورڈ میں نہیں ہونا چاہئے تھا، عمر اکمل بھی اعتراف جرم کرکے واپس آجائے گا۔

انہوں نے کہا کہ ایسا قانون بنائیں کہ کسی کھلاڑی میں ہمت نہ ہو کہ وہ فکسنگ کرسکے، جب تک بکیز کو سزا نہیں ہوگی، کھلاڑی ایسے ہی اسپاٹ فکسنگ اور میچ فکسنگ کرتے رہیں گے