سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی – با اثر ترین ڈائریکٹر سرفراز احمد کا ریٹائرمنٹ سے صرف دوماہ قبل گلشن سے تبادلہ – جمشید ٹاون زون ٹو میں تعینات کردیا

کراچی(اسٹاف رپورٹر)سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی نے ادارے با اثر ترین ڈائریکٹر سرفراز احمد کا ان کی ریٹائرمنٹ سے صرف دوماہ قبل گلشن سے تبادلہ کرکے جمشید ٹاون زون ٹو میں تعینات کردیا ہے۔

جمشید ٹاون ٹاون شہر میں غیر قانونی تعمیرات کی مد میں وصول کیے جانے والے پیسوں کے حوالے سے پوش ترین سمجھا جاتا ہے کچھ عرصہ قبل عدالتی حکم پر عہدے سے ہٹائے جانے والے ڈی جی ظفر احسن نے غیر قانونی تعمیرات کی مسلسل شکایات پر متعدد ڈائریکٹر کے تبادلے کیے تھے جس میں سرفراز احمد بھی شامل تھے جنہیں جمشید ٹاون سے ہی ہٹا کر گلشن اقبال ٹاون تعینات کیا تھا زرائع کے مطابق اسی دوران ادارے کے ایک سینئر معطل ڈائریکٹر عادل عمر نے سرفراز حسین پر جمشید ٹاؤن سے ہی رشوت وصولی کا الزام عائد کیا تھاسوشل میڈیا پر وائرل آڈیو ریکارڈنگ میں عادل عمر نے 61 لاکھ کی ماہانہ کلکشن کا الزام عائد کیا تھا۔ذرائع کے مطابق ادارے نے 21 اپریل کو جمشید ٹاؤن 2 میں ہی انہدامی کاروائی رکوائی تھی۔انہدامی کاروائی سے بچائی جانے والی غیر قانونی تعمیرات کی مالیت 5 کروڑ روپے سے زائد ہے، ذرائع کے مطابق مزکورہ غیر قانونی تعمیرات کے خلاف عدالتی حکم پر کارروائی کے لیے جمشید ٹاون سے ہٹائے جانے والے ڈائریکٹر بضد تھے جبکہ ادارے سے ازخود ملازمت چھوڑنے والے سابق ڈائریکٹر ساجد محمود بھی ان غیر قانونی تعمیرات کے خلاف بہت فعال ہیں اسے موقع پر جمشیدٹاون ٹو کے ڈائریکٹر کو اچانک تبدیل کرکے بااثر افسر کی تعیناتی پر ایس بی سی اے کے افسران سوالات اٹھا رہے ہیں واضح رہے کہ جمشید ٹاون ٹو میں تعینات کیے جانے والے سرفراز احمد کے بھائی ایک وفاقی تحقیقاتی ادارے کے سب سے اعلی افسر بتائے جاتے ہیں