عظیم کھلاڑی کیسے بنا جائے؟ وسیم اکرم نے نوجوان بولرز کو اہم گر بتادئیے

کراچی:لیجنڈری فاسٹ بولر وسیم اکرم نے پی سی بی کے تحت موجودہ اور ایمرجنگ فاسٹ بولرز کو آن لائن لیکچر دیا۔

تفصیلات کے مطابق سابق کپتان اور پی ایس ایل میں کراچی کنگز کے صدر وسیم اکرم نے کھلاڑیوں کو کارکردگی پر فوکس کرنے اور فٹنس پر کام کرنے کی ٹپس دیں اور کرونا وائرس کی وجہ سے ملنے والی فرصت کے لمحات کو بھرپور فائدہ مند بنانے پر زور دیا۔

وسیم اکرم نے کہا کہ فاسٹ بولر کے لیے ڈسپلن اور خود اعتمادی سے بڑھ کر کچھ نہیں ہوتا، کیریئر کے مشکل وقت میں خوف کو پس پشت ڈال کر آگے بڑھنا ہی کامیابی ہے۔
سابق کپتان نے ماضی کو دہراتے ہوئے فاسٹ بولرز کو بتایا کہ وہ کبھی بھی کسی خاص کارکردگی پر مطمئن نہیں ہوتے تھے کیونکہ ایک اچھے کھلاڑی کے لیے ہر دن نیا دن ہوتا ہے اور اسے ہر دن کے لیے ایک نئی حکمت عملی تیار کرنا ہوتی ہے۔

وسیم اکرم نے کہا کہ طویل طرز کی کرکٹ ہی اصل کرکٹ ہے، عظیم کھلاڑی بننے کے لیے یہاں کامیابی حاصل کرنا ضروری ہے، کرکٹ اعدادوشمار کا کھیل ہے، اپنے کیریئر کے دوران اپنے اہداف ترتیب دیتا تھا سب سے بڑا ہدف یہی تھا کہ کیا کرکٹ چھوڑنے کے بعد انہیں یاد کیا جائے گا۔

شاہین شاہ آفریدی کو ٹو ڈبلیوز کی کہانی سناتے ہوئے وسیم اکرم نے کہا کہ فاسٹ بولرز میں مثبت رقابت ضروری ہے اس سے کھیل میں نکھار آتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ وہ وقار یونس کے رن اپ سے بہت متاثر تھے، ان کی اسپیڈ سے دنیائے کرکٹ کے بڑے بڑے بیٹسمین ڈرتے تھے، وقار یونس اور انہوں نے بڑی بڑی ٹیموں کے خلاف میچز کا پانسہ ایک دوسرے کی قابلیت پر اعتماد کرکے ہی پلٹا تھا۔

وسیم اکرم نے کھلاڑیوں کو واضح کیا کہ ان کی کامیابی کا راز ڈسلپن اور اپنے اہداف کی تیاری کے لیے سخت محنت کرنا تھی۔