کورونا: برطانیہ میں پاکستانی نژاد ڈاکٹر میمونہ رعنا جاں بحق

برطانیہ کی نیشنل ہیلتھ سروس کی فرنٹ لائن پر کام کرنے والی پاکستان نژاد برطانوی ڈاکٹر میمونہ رعنا خود وائرس کا شکار ہوکر جان کی بازی ہار گئیں۔

میمونہ رعنا پہلی پاکستانی خاتون ڈاکٹر ہیں جنہوں نے نیشنل ہیلتھ سروس برطانیہ کی جانب سے کورونا وائرس کے خلاف جنگ لڑتے ہوئے جان دی۔

48 سالہ ڈاکٹر میمونہ کا تعلق لاہور سے تھا اور وہ 15 برسوں سے مشرقی لندن میں اپنے شوہر ڈاکٹر عظیم قریشی کے ہمراہ رہائش پذیر تھیں، دونوں کی ایک 8 سالہ بیٹی بھی ہے۔

گزشتہ روز بھی برطانیہ میں کورونا وائرس کی وبا میں مبتلا ہو کر ایک پاکستانی ڈاکٹر جاں بحق ہو گئے تھے۔ کورونا وائرس کا شکار ہونے والے برٹش پاکستانی ڈاکٹر ناصر خان بولٹن اسپتال میں گزشتہ 2 ہفتے سے وینٹی لیٹر پر تھے۔

واضح رہے کہ برطانیہ بھر میں کورونا وائرس کے ناصرف مریضوں کی تعداد میں بلکہ اس سے ہونے والی اموات کی تعداد میں بھی تیزی سے اضافہ ہو رہا ہے، برطانیہ کورونا وائرس کے مریضوں کی تعداد کے حوالے سے ممالک کی فہرست میں پانچویں نمبر پر پہنچ چکا ہے