غیرسنجیدگی کی انتہا، بھارتیوں نے کرونا کو مذاق سمجھ لیا

نئی دہلی: بھارت میں کروناوائرس سے متعلق آگاہی فراہم کرنے کے لیے ایسے انوکھے اور منفرد طریقے اپنائے جارہے ہیں جس نے سوشل میڈیا صارفین کو ہنسنے پر مبجور کردیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی شہر چنائے میں شہری نے رکشے کو کروناوائرس کے روپ میں تبدیل کردیا، اس اقدام کو سوشل میڈیا صارفین نے شدید تنقید کا نشانہ بنایا تاہم کچھ لوگوں نے حق میں بھی تبصرے کیے۔
رکشہ ڈرائیور کا کہنا ہے کہ رکشے کے روپ کو تبدیل کرنے کا مقصد شہریوں کو کروناوائرس سے متعلق آگاہی فراہم کرنا ہے۔ مذکورہ شہری سڑکوں اور گلیوں میں روزانہ گشت کرتا ہے تاکہ لوگ زیادہ سے زیادہ حالات کی سنجیدگی کو سمجھ سکیں اور وبائی مرض سے مقابلے کے لیے ہرممکن اقدامات کریں۔

ایک سوشل میڈیا صارف کا کہنا تھا کہ رکشے سے نہیں بلکہ حکومتی اقدامات سے کرونا کا خاتمہ ممکن ہے
قبل ازیں بھارتی ریاست اودیسا میں ایک ایسا شہری منظر عام پر آیا جو بانی ہندوستان مہاتما گاندھی کا روپ دھار کر لوگوں میں کرونا سے متعلق آگاہی فراہم کررہا تھا جس پر بھی شہریوں نے تنقید ک