پرائیویٹ اسکولوں کو تین مہینے کی فیس نہ لینے کا پابند بنایا جائے ۔پیرنٹس ایکشن کمیٹی کی اپیل

چیئرمین پیرنٹس ایکشن کمیٹی محمد کاشف صابرانی نے اپیل کی ہے کہ پرائیویٹ اسکولوں کو تین مہینے کی فیس نہ لینے کا پابند بنایا جائے سندھ ہائی کورٹ میں میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ پورے ملک میں لاک ڈاؤن ہے دفاتر بند ہیں کاروبار نہیں ہو رہا روزگار کے لالے پڑے ہوئے ہیں لوگ راشن کا انتظار کر رہے ہیں

ان حالات میں کوئی کیسے کما کر اسکولوں کی فیس ادا کر سکتا ہے والدین کی آمدن نہیں ہوگی تو وہ بچوں کی اسکول فیس کیسے ادا کریں گے حکومت اور عدالت کو چاہیے کہ تین مہینے تک فیس نہ لینے کی ہدایت کریں اور پرائیویٹ اسکولوں کو پابند بنایا جائے کہ وہ تین مہینے کی فیس وصول نہ کریں جب میڈیا کے نمائندوں نے ان سے کہا کہ پھر اسکولوں میں پڑھانے والے اساتذہ کی تنخواہ کہاں سے آئے گی تو ان کا کہنا تھا کہ اسکولوں کو چاہیے کہ اساتذہ کو تنخواہ ادا کریں ویسے بھی بہت کم تنخواہ دیتے ہیں اور اساتذہ بھی غریب طبقہ میں آتے ہیں ان کے لئے بھی مشکلات ہیں اسکول انتظامیہ تو سارا سال کماتی ہے جون جولائی کی فیس بھی لے لیتے ہیں ایڈوانس فیس بھی لیتے ہیں مختلف چارجز بھی وصول کرتے ہیں ایک ایک براج والے اسکول نے دس برانچیں بنا رکھی ہیں یہ پیسہ کہاں سے آیا ہے ان کو چاہئے کہ والدین کے ساتھ رعایت کریں ۔اسکول والے خود نہیں کریں گے تو حکومت اور عدالت کو چاہیے کہ ان کو پابند بنائے
report-waheed-jang-for jeeveypakistan.com