رمضان المبارک میں قیمتوں کو کنٹرول کرنے کے لئے اعزازی مجسٹریٹ مقرر کیئے جائیں

رمضان المبارک میں قیمتوں کو کنٹرول کرنے کے لئے اعزازی مجسٹریٹ مقرر کیئے جائیں 

کنزیومر ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین کوکب اقبال کی میڈیا سے گفتگو

کراچی (پ ر) رمضان المبارک کی آمد سے قبل ہی منافع خور سرگرم ہوگئے انہیںنا ہی کرونا وائر سے ڈر و خوف ہے اور نہ ہی اللہ کے عذاب سے منافع خوری عروج پر ہے پورے سندھ خصوصاً حیدرآباد اور کراچی ڈویژن میں صارفین کی کہیں شنوائی نہیں اعزازی مجسٹریٹ مقرر کیئے جائیں کیونکہ ڈسٹرک ایڈمنسٹریشن پرائس کنٹرول کرنے میں دلچسپی نہیں رکھتی یا وہ کرونا وائرس کو کنٹرول کرنے میں لگی ہے ۔


یہ بات صارفین کی نمائندہ تنظیم کنزیومر ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین کوکب اقبال نے میڈیا کے نمائندوں سے ٹیلی فون پر بات کرتے ہوئے کہی انہوں نے کہا کہ رمضان المبارک کی آمد میں چند دن ہیں جبکہ ابھی تک کمشنر کراچی افتخار شلوانی کے آفس میں پرائس کنٹرول کرنے کے حوالے سے کوئی میٹنگ نہیں بلوائی گئی انہوں نے کہا کہ اجناس کی قیمتوں سمیت گائے ، بکرے اور پھل کی قیمتوں میں من مانہ اضافہ کردیا گیا ہے ۔ کراچی سمیت پورے سندھ میں کسی بھی علاقے میں صارفین کو حکومتی نرخوں پر چیزیں دستیاب نہیں ہیں وفاقی حکومت نے یوٹیلیٹی اسٹورز پر بے شمار اشیاء پر اربوں کی سبسڈی دینے کا اعلان کیا مگر ابھی تک صارفین یوٹیلیٹی اسٹورز پر کم قیمت اشیاء کی تلاش میں سرگرداں نظر آتے ہیں ۔ یوٹیلیٹی اسٹورز کی کم تعداد کی وجہ سے چیئرمین یوٹیلیٹی اسٹور نے کچھ دن پہلے یہ بتایا تھا کہ یوٹیلیٹی اسٹور کے موبائل یونٹ پورے پاکستان میں رمضان المبارک پر دی ہوئی سبسڈی اشیاء لیکر ہر علاقے میں جائینگے مگر ابھی تک ایسی کوئی سرگرمی نظر نہیں آئی جس سے یہ تاثر ملتا ہے کہ صارفین کو رمضان پیکیج سے ریلیف حاسل ہوگا کنزیومر ایسوسی ایشن آف پاکستان کے چیئرمین کوکب اقبال نے ایک سوال کے جواب میں بتایاکہ وفاقی اور صوبائی حکومتیں تاجروں کے ساتھ تو مشاورت کرتی ہیں مگر ابھی تک صارفین کی نمائندہ تنظیم سے مہنگائی کو کنٹرول کرنے اور صارفین کی دادرسی کیلئے کوئی رابطہ نہیں کیا گیا۔