نیا پاکستان، وفاقی حکومت نے ایک خاتون وفاقی وزیر کے بھانجے کو 17 لاکھ روپے ماہانہ اور بھاری مراعات کے ساتھ سرکاری نوکری دے دی

نیا پاکستان ۔وفاقی حکومت نے ایک خاتون وفاقی وزیر کے بھانجے کو 17 لاکھ روپے ماہانہ   اور بھاری مراعات کے ساتھ سرکاری نوکری دے دی ۔یہ نوکری پاکستان منرل ڈویلپمنٹ کارپوریشن کے مینجنگ ڈائریکٹر کی حیثیت سے فرحان شفیع کو دی گئی ہے جو ایک بھاری بھرکم وفاقی وزیر کے بھانجے ہیں ان کے تقرر نامے میں ان کی تنخواہ اور بھاری مراعات کی تفصیل بھی بیان کی گئی ہے انہیں گھر کے کرائے کی مد میں 6  لاکھ 30 ہزار روپے اور یوٹیلیٹی بلز ادا کرنے کے لیے 97 ہزار روپے ماہانہ ملیں گے  اس کے علاوہ اٹھارہ سو سی سی کی ایک نئی گاڑی بمع ڈرائیور ان کے پاس ہوگی اور 360 لیٹر پیٹرول ہر مہینے وہ حاصل کر سکیں گے ۔اس کے علاوہ انہیں سرکاری خرچ پر ایک فریج دو ایئرکنڈیشن اور بیماری کی صورت میں انہیں اور ان کے فیملی کو مفت علاج فراہم کیا جائے گا انہیں اسلام آباد کلب کی ممبر شپ بھی ملے گی انہیں تین سال کے کنٹریکٹ کے معاہدے پر ملازمت دی گئی ہے جس میں بعد میں توسیع بھی کی جا سکتی ہے انہیں بونس بھی ملیں گے۔سوشل میڈیا پر خاتون وفاقی وزیر کے بھانجے کے تقرر نامے کا نوٹیفکیشن مختلف تبصروں کے ساتھ زبردست تنقید کی زد میں ہے ۔ نیا پاکستان ایک خاتون وفاقی وزیر کے بھانجے کو سفارش کی بنیاد پر نوکری دیتے وقت ان کی مکمل عیش اور  آرام کا خیال رکھے گا ۔