کورونا وائرس : برطانوی وزیراعظم نے لاک ڈاؤن میں مزید توسیع کا عندیہ دے دیا

کورونا وائرس چین کے بعد سب سے زیادہ نقصان یورپی ممالک کو پہنچا رہا ہے جبکہ برطانیہ میں بھی حالات انتہائی تشویش ناک ہیں جس پر قابو پانے کے لیے برطانوی وزیر اعظم بورس جانسن نے 23مارچ کو مکمل لاک ڈاؤن کا اعلان کیا تھا۔

تاہم اب اس عالمی وبا کورونا وائرس کی روک تھام کے لئے برطانیہ میں جاری لاک ڈاؤن کی مدت سات مئی تک بڑھائی جائے گی۔ غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق برطانیہ کے وزیر خارجہ اور موجودہ وقت میں نگراں وزیراعظم ڈومینک راب اس کا اعلان جمعرات کو کریں گے۔

ڈومینک راب برطانوی وزیراعظم بورس جانسن کے بیمار ہونے کی وجہ سے نگراں وزیراعظم کی ذمہ داری ادا کر رہے ہیں۔ بورس جانسن جو پچھلے دنوں کورونا وائرس سے متاثر ہوئے تھے اورحال ہی میں انہیں صحت مند قرار دے کر اسپتال سے فارغ کردیا گیا ہے۔

جانسن نے ملک میں تیزی سے اس وائرس کے پھیلاؤ کو دیکھتے ہوئے 23 مارچ کوسوشل ڈسٹنسنگ سمیت کئی احتیاطی قدم اٹھائے جانے کا اعلان کیا تھا۔

اس وقت برطانیہ میں ضروری سامان کی خریداری، ڈاکٹرز کے اپوائنمنٹ اورایکسرسائز وغیرہ کرنے کے لئے ایک شخص ایک دن میں ایک بار ہی گھر سے باہر نکل سکتا ہے۔

برطانیہ کے سوشل کیئر محکمہ نے پیر کو بتایا کہ اس وبا سے 717 نئی اموات کے بعد کورونا وائرس سے مرنے والوں کی تعداد بڑھ کر 11329ہو گئی ہے۔ وہیں صحت حکام کے مطابق گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ملک میں كووڈ -19 کے4342نئے کیسز کی تصدیق ہوئی ہے۔

واضح رہے کہ دنیا بھر میں کورونا وائرس کے مصدقہ متاثرین 19 لاکھ 20 ہزار اور ہلاکتیں ایک لاکھ 19ہزار سے بڑھ گئی ہیں۔ بھارت نے ملک گیر لاک ڈاؤن میں تین مئی جبکہ فرانس میں 11 مئی تک توسیع کر دی گئی ہے۔ عالمی ادارہ صحت نے کہا ہے کہ صرف ایک مؤثر ویکسین کورونا وائرس کے پھیلاؤ کو مکمل طور پر روک سکتی ہے۔

Courtesy Ary Urdu