پاکستان میں کورونا مریض5716، اموات 96

پاکستان میں کورونا وائرس کے مریضوں کی کُل تعداد 5 ہزار 716 ہو گئی، جبکہ 3 مزید کورونا مریضوں کے انتقال کرنے کے بعد اس سے اموات کی تعداد 96 ہو چکی ہے۔

ملک میں 4 ہزار 256 کورونا کے مریض اب بھی اسپتالوں میں زیرِ علاج ہیں، جن میں سے 46 کی حالت تشویش ناک ہے جبکہ 1 ہزار 378 مریض اس بیماری سے صحت یاب ہو کر اپنے گھروں کو لوٹ چکے ہیں۔

پنجاب

پنجاب میں کورونا کے مریضوں کی تعداد 2 ہزار 826 ہو گئی ہے جبکہ اس سے ہلاکتیں 24 ہو گئیں۔

پاکستان میں کورونا وائرس پھیلاؤ کا سلسلہ جاری ہے اور آج گلگت بلتستان میں مزید 9 کیسز رپورٹ ہونے سے ملک میں متاثرین کی تعداد 5 ہزار 716 جبکہ اموات 96 ہوگئیں۔

دنیا بھر میں ساڑھے 20 لاکھ لوگوں کو متاثر اور ایک لاکھ 14 ہزار کے قریب اموات کا سبب بنے والے اس مہلک وائرس کا پاکستان میں اپریل کے ماہ سے مزید تیز ہوگیا ہے۔

یکم اپریل سے اب تک نہ صرف ملک میں کورونا متاثرین کی تعداد دوگنا بڑھی بلکہ اموات میں بھی روزانہ اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

گزشتہ بھی ملک میں کورونا متاثرین کی تصدیق ہوئی اور سندھ، پنجاب، خیبر پختونخوا بلوچستان، آزاد کشمیر اور اسلام آباد میں مزید نئے کیسز رپورٹ ہوئے

سندھ
وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے صوبے میں مزید 41 کیسز اور ایک موت کی تصدیق کی تھی۔

کراچی میں پریس کانفرنس میں انہوں نے بتایا تھا کہ سندھ میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 531 ٹیسٹ کیے جس میں 41 لوگ مزید متاثر ہوئے جس کے بعد متاثرین کی تعداد 1452 ہوگئی۔

انہوں نے کہا تھا کہ گزشتہ 24 گھنٹوں میں ایک موت بھی ہوئی جس کے بعد انتقال کرنے والوں کی تعداد 31 ہوگئی۔

ساتھ ہی ان کا کہنا تھا کہ صوبے میں مزید 30 لوگ صحتیاب بھی ہوئے۔

علاوہ ازیں محکمہ صحت سندھ نے ان 41 کیسز کی تفصیلات بتاتے ہوئے کہا تھا کہ یہ 41 کیسز اور ایک موت کراچی میں ہوئی۔

انہوں نے بتایا تھا کہ یہ تمام کیسز مقامی سطح پر منتقلی کے ہیں جبکہ وائرس سے انتقال کرنے والی ایک 64 سالہ خاتون تھیں۔

خیال رہے کہ اس وقت صوبہ سندھ میں صرف کراچی میں 937 افراد کورونا وائرس کا شکار ہوچکے ہیں جبکہ صوبے کی مجموعی 31 اموات میں سے 28 کراچی میں ہوئی ہیں۔

پنجاب
ادھر صوبہ پنجاب میں گزشتہ روز کورونا وائرس کے مزید 232 کیسز اور ایک موت کی تصدیق کی گئی۔

ترجمان پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر نے بتایا تھا کہ صوبے میں 65 نئے کیسز سے متاثرین کی تعداد 2656 ہوگئی۔

انہوں نے بتایا تھا کہ ان مجموعی کیسز میں زائرین سینٹر سے 701، رائے ونڈ سے منسلک 864، ایک ہزار 2 عام شہری اور 89 قیدی ہیں۔

مزید یہ کہ پرائمری اینڈ سیکنڈری ہیلتھ کیئر ڈیپارٹمنٹ نے صوبے میں ایک موت کی بھی تصدیق کی تھی جس کے بعد وہاں اموات کی تعداد 24 ہوگئی۔

رات گئے وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے ٹوئٹ کرتے ہوئے مزید 170 کیسز کی تصدیق کی تھی جس کے بعد صوبے میں متاثرین کی تعداد 2826 ہوگئی۔

انہوں نے کہا تھا کہ اب تک ڈیرہ غازی خان اور ملتان قرنطینہ مراکز میں 701، شہریوں میں 1059، قیدیوں میں 89 اور تبلیغی جماعت سے منسلک افراد میں 977 کیسز سامنے آچکے ہیں

خیبر پختونخوا
محکمہ صحت خیبر پختونخوا نے کورونا وائرس کے مزید 56 کیسز کی تصدیق کی تھی جس کے بعد صوبے میں متاثرین کی تعداد 800 ہوگئی۔

بیان میں کورونا وائرس سے مزید ایک مریض کے جاں بحق ہونے کی بھی تصدیق کی گئی تھی، یوں خیبر پختونخوا میں اموات کی تعداد 35 ہوگئی ہے۔

بیان میں کہا گیا تھا کہ ایبٹ آباد کے ایوب ٹیچنگ ہسپتال میں ایک مریض جاں بحق ہوا۔

بلوچستان
گزشتہ روز بلوچستان میں بھی ایک اور کیسز کیس تصدیق کی گئی۔

ترجمان بلوچستان حکومت لیاقت شاہوانی کا کہنا تھا کہ صوبے میں ایک اور کیس کے بعد متاثرین کی تعداد 231 تک پہنچ گئی۔

اسلام آباد
سرکاری سطح پر اعداد و شمار بتانے والی ویب سائٹ کے مطابق اسلام آباد میں مزید 12 افراد وائرس سے متاثر ہوئے۔

ان نئے متاثرین کے بعد وفاقی دارالحکومت میں متاثرہ افراد کی تعداد 131 تک پہنچ گئی۔

آزاد کشمیر
کورونا وائرس کے حوالے سے سرکاری ویب سائٹ کے اعداد و شمار کے مطابق آزاد جموں و کشمیر میں مزید 3 کیسز سامنے آئے ہیں تھے۔

اس اضافے کے بعد آزاد جموں و کشمیر میں متاثرہ افراد کی تعداد 43 ہوگئی ہے۔

صحتیاب
ادھر جہاں پاکستان میں کیسز اور اموات میں تیزی دیکھی جارہی ہے وہیں صحتیاب افراد کی تعداد بھی بڑھ رہی ہے۔

آج آنے والے نئے اعداد و شمار میں پاکستان میں مزید افراد وائرس کو شکست دے کر صحتیاب ہوگئے۔

جس کے بعد ملک میں صحتیاب ہونے والوں کی مجموعی تعداد 1378 ہوگئی۔

نئے اعداد و شمار کے بعد مجموعی ملکی صورتحال کو دیکھیں تو پنجاب میں 2826 کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔اکستان میں ہونے والی 95 اموات میں ابھی تک سب سے زیادہ خیبرپختونخوا میں ہوئی ہیں۔

خیبرپختونخوا: 35 اموات
سندھ: 31 اموات
پنجاب: 24 اموات
گلگت بلتستان: 3 اموات
بلوچستان: 2 اموات
اسلام آباد: ایک موت
آزاد کشمیر: کوئی نہیں

jang+dawnnews-report

A medical staff member wearing protective gear takes information from a resident sitting in a car for a coronavirus test at a drive-through screening and testing facility point during a government-imposed nationwide lockdown as a preventive measure against the COVID-19 coronavirus, at the port city of Karachi on April 4, 2020. – The first drive-through coronavirus testing facility has been established by the Sindh provincial government at Karachi which will enable suspected coronavirus patients to get themselves tested without having to wait in long hospital queues. (Photo by Rizwan TABASSUM / AFP)