پیپلزپارٹی سندھ کے عوام کو راشن پہنچانے میں ناکام، مسلم لیگ فنکشنل اور جی ڈی اے پی ٹی آئی کی مرکزی حکومت کیساتھ، عمران خان ہی صورتحال سے باہر نکالیں گے

پاکستان مسلم لیگ فنکشنل سندھ کے صدر اور جی ڈی اے کے مرکزی رہنماء سابق وفاقی وزیر سید صدرالدین شاہ راشدی نے کہا ہے کے وفاقی سرکار اس مشکل گھڑی میں اپنی قوم کو تنہا نہیں چھوڑ سکتے ،وزیر اعظم عمران خان نے قوم سے کیا گیا اپنا وعدہ پورا کر دکھایا، احساس کفالت پروگرام کے تحت سندھ کے لاکھوں خاندانوں کو فی کس 12 ہزار روپئے بغیر کسی سفارش ملنا شروع ہوگئے ہیں اپنے جاری بیان میں سید صدرالدین شاہ راشدی نے کہا کہ سندھ حکومت نے سندھ کی عوام کو اس مشکل گھڑی میں تنہا چھوڑ دیا ہے اور عوام سے کئے گئے وعدے وفا نہیں ہو سکے، ابھی تک سندھ کے مزدور اور غریبوں کو راشن کی تقسیم شروع نہیں ہوسکی، راشن کی مد میں رکھے گئے اربوں روپے ہمیشہ کی طرح کرپشن کے نظر ہو گئے ہیں کیا سندھ حکومت عوام کو بھوک کی وجہ سے مرنے کے بعد ان کو راشن مہیا کرے گی،

سندھ حکومت راشن کی تقسیم فوری طور پر صاف و شفاف ایمانداری سے شروع کردے ورنہ سندھ میں لوگ کورونا سے کم بھوک و افلاس سے زیادہ مرجائیں گے، انہوں نے کہا کہ سندھ حکومت لاک ڈاؤن کرکے خود سوگئی ہے، ہسپتالوں کی حالت بہت زیادہ خراب ہے، ڈاکٹرز، نرسز اور عملے کے پاس حفاظتی کٹس موجود نہیں ہیں، خدانخواستہ کہیں یہ نہ ہو کے عام لوگوں کی طرع ڈاکٹرز اور عملہ کورونا وائرس کا شکار ہو جائے، انہوں کہا کہ لاک ڈاؤن اس وقت تک کامیاب نہیں ہو سکتا جب تک مزدور اور غریب عوام کو راشن مہیا نہیں کیا جائے گا عوام راشن کے لیے سینکڑوں کے تعداد میں روڈوں پر نکل پڑتی ہے جس سے کورونا وائرس تیزی سے بڑھ رہا ہے، سندھ حکومت وائرس کے خاتمے اور عوام کو راشن کی تقسیم کرنے میں مکمل طور پر ناکام ہوگئی ہے۔