کراچی پولیس نے لاک ڈاؤن کے دوران غیر ضروری طور پر گھر سے نکلنے والوں پر جرمانہ عائد کرنے پر غور شروع کردیا

 کراچی میں بلا ضرورت گھر سے نکلنے والوں پر جرمانے کی تجویز، کراچی پولیس نے لاک ڈاؤن کے دوران غیر ضروری طور پر گھر سے نکلنے والوں پر جرمانہ عائد کرنے پر غور شروع کردیا ہے۔ تفصیلات کے مطابق ملک بھر میں کورونا وائرس کی وبا پھیلنے کے باوجود شہری خود کو محدود نہیں کررہے ہیں اور غیر ضروری طور پر گھروں سے باہر سڑکوں پر گھومتے دکھائی دیتے ہیں، خلاف ورزی پر ملک بھر میں ہزاروں افراد گرفتار اور سینکڑوں مقدمات درج کیے جاچکے ہیں تاہم عوام پر خاطر خواہ اثر نہیں ہوا۔
اس حوالے سے اب کراچی پولیس نے اپنی حکمت عملی تبدیل کرنے پر غور شروع کردیا ہے۔ ذرائع کے مطابق غیر ضروری طور پر سڑکوں پر نکلنے والے افراد پر بھاری جرمانے عائد کرنے کی تجویز پر غور کیا گارہا ہے، کہا جا رہا ہے کہ بھاری جرمانہ لوگوں کو گھروں میں محمود کرنے کیلئے موثر ثابت ہوسکتا ہے۔
اس حوالے سے غور کیا جارہا ہے کہ اگر کوئی شہری دوسری بار غیر ضروری طور پر سڑک پر نظر آئے تو جرمانہ کیا جائے جبکہ تیسری بار نظر آنے پر اسے گرفتار کرلیا جائے گا۔
افسران کا کہنا تھا کہ سندھ حکومت کو تجویز پیش کی جائے گی کہ چوںکہ سڑکوں پر لگے ناکوں پر ٹریفک پولیس بھی ساتھ ہے، ٹریفک پولیس کے افسر کو یہ خصوصی اختیارات دیے جائیں کہ وہ بھاری جرمانے عائد کرسکے تاکہ غیر ضروری طور پر گھروں سے باہر نکلنے والے افراد کی حوصلہ شکنی ہوسکے۔ اگر ایک مرتبہ بھاری جرمانہ عائد ہوجائے گا تو پھر نہ صرف وہ شہری بلا ضرورت باہر نہیں نکلے گا بلکہ دوسرے بھی اس سے سبق حاصل کریں گے، جو بھی غیر ضروری طور پر گھر سے نکلے گا اسے بھاری جرمانے کا خوف ضرور ہوگا۔
ذرائع کے مطابق لاک ڈاؤن کے دوران اب تک کئی افراد کو گرفتار کیا گیا، گرفتاری کی صورت میں انھیں تھانے میں رکھنا پڑتا ہے، پھر عدالت میں پیشی اور اس کے بعد جیل منتقلی کی صورت میں پولیس اہلکاروں کو بھی وائرس کا خطرہ لاحق ہوسکتا ہے، تھانوں پر دباؤ کم کرنے کے لیے بھاری جرمانے عائد کرنے کی تجویز پیش کی جارہی ہے۔