کراچی بار ایسوسی ایشن : سانحہ 9 اپریل کی یاد میں سٹی کورٹ میں وکلاء برادری بازوؤں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر پیش ہوئے

کراچی :  کراچی بار ایسوسی ایشن کی جانب سے گذشتہ روز سانحہ 9 اپریل کی یاد میں سٹی کورٹ میں وکلاء برادری بازوؤں پر سیاہ پٹیاں باندھ کر پیش ہوئے کراچی بار کے عہدیداران صدرمنیر اے ملک، جنرل سیکریٹری جے ایم کورائی، ترجمان انور میمن، آصف احمد، محمد باقر مہدی نے مشترکہ بیان میں کہا ہے کہ یہ سیاہ دن کبھی بھولنے والا دن نہیں، وکلاء برادری نے جمہوریت کی بحالی کیلئے جو قربانیاں دی ہیں وہ کسی سے ڈھکی چھپی نہیں جمہوریت کی بحالی کا مقصد تھا کہ غریب عوام کو سہولیات مل سکے ڈکٹیٹروں کی حکومت نے جمہوریت کی بحالی کو بہت توڑنے کی سازشیں کی تھی مگر وہ کامیاب نہیں ہوئے تھے جمہوریت بحالی میں اہم کردار وکلاء برادری نے ادا کیا تھا ہم نے ہمیشہ حق وسچ کی آواز بلند کرنے کیلئے جدوجہد کی ہے سانحہ طاہر پلازہ سمیت متعدد وکلاء کے دفاتر نظر آتش کئے گئے تھے زندھ جلایا گیا تھا وہ لمحات کے دن جب بھی آتے ہیں قریب تو دل خون کے آنسو روتا ہے ہم چیف جسٹس آف پاکستان سے پر زرو اپیل کرتے ہیں کہ اس سانحہ کا نوٹس لیں تاکہ شہید وکلاء کے اہل خانہ کو انصاف مل سکے۔