شعیب ملک اور رمیز کی لڑائی میں شدت

پاکستانی کرکٹ ٹیم کے دو سابق کپتانوں شعیب ملک اور رمیز راجا کے درمیان سوشل میڈیا پر لڑائی میں شدت آتی دکھائی دے رہی ہے۔ رمیز کے آئینہ دکھانے پر شعیب برا مان گئے۔ رمیز راجا نے شعیب ملک اور محمد حفیظ کو ریٹائر منٹ لینے کا مشورہ دیا تھا جس کے بعد شعیب ملک نے انہیں طنزیہ جواب دیا تھا۔ جمعرات کو رمیز راجا ایکشن میں آئے اور انہوں نے شعیب ملک کے رد عمل کا سنجیدہ جواب دے د یا ہے۔ مشہور مبصر کا کہنا ہے کہ آپ میرے کہاں سے ریٹائر ہونے کی بات کر رہے ہیں ۔ کیا پاکستان کرکٹ کے لیے آواز بلند کرنے سے ریٹائر ہو جاؤں ۔ پاکستان کرکٹ کو ٹاپ پر واپس دیکھنا چاہتا ہوں ، کیا اس سے ریٹائر ہو جائوں ۔ ملک صاحب میں ان معاملات سے کبھی ریٹائر نہیں ہو سکتا ۔ نہ اپنے موقف سے دستبردار ۔ آپ لوگوں کے لیے2022 میں کمنٹری کا آغاز کرنا مشکل ہو گا۔ مجھے آپ لوگوں کے بتانے کی ضرورت نہیں ہے ۔ میں اس وقت ریٹائر ہو گیا تھا جب پاکستان ٹیم کا کپتان تھا ۔ شعیب ملک اور محمد حفیظ کی بنگلہ دیش کے خلاف ٹی 20 سیریز میں واپسی ہوئی تھی لیکن رمیز راجا کا موقف تھا کہ رمیز راجا نے شعیب ملک اور محمد حفیظ کو ریٹائر ہوجانا چاہیے۔ بدھ کو شعیب ملک نے سوشل میڈیا پر ازراہ مذاق کہا تھاکہ ہم تینوں 2022 میں ریٹائر منٹ کا پلان کر لیتے ہیں۔