بے روزگار وطن واپسی کے لیے تیار، اگلے ہفتے پروازیں آئیں گی، مالی صورتحال ابتر

بیرون ملک ملازمت کرنے والے پاکستانیوں کی بڑی تعداد کرونا وائرس پھیلنے کے بعد پیدا شدہ صورت حال میں بیروزگار ہو گئی ہے بڑے پیمانے پر لوگوں کی نوکریاں ختم ہوگئی ہیں اور انہیں ملازمت سے فارغ ہونے کی وجہ سے اب وہاں رہنا مشکل ہوگیا ہے ہزاروں کی تعداد میں مختلف ملکوں سے پاکستانیوں نے وطن واپسی کی تیاری کرلی ہے ہے زیادہ تر وہ لوگ ہیں جو مزدور محنت کش طبقہ ہے بیرون ملک کرونا کی وجہ سے ہونے والے لاکھ ڈاؤن نے بڑی تعداد میں لوگوں کو بیروزگار کیا ہے پاکستانیوں کی بڑی تعداد بھی وہاں روزگار کے حصول کے لیے گئی ہوئی تھی وبا پھیلنے سے وہاں پیدا شدہ صورتحال کی وجہ سے نوکریاں ختم اور ملازمت کے مواقع ختم ہوگئے وہاں رہنا مالی طور پر مشکل سے مشکل تر ہوتا جا رہا ہے لوگ واپسی کی ٹکٹ کٹوا رہے ہیں حکومت کی جانب سے اسد عمر نے بھی صورتحال کی سنگینی سے آگاہ کردیا ہے کہ اگلے ہفتے پروازیں آئیں گی یاد رہے کہ ابھی تک صرف اسلام آباد پر انٹرنیشنل فلائٹ آرہی تھی آئندہ ہفتے سے دوسرے شہروں میں بھی جہاد آنا شروع ہو جائیں گے بیرون ملک سے بڑی تعداد میں آنے والے بے روزگار افراد ہیں اور مالی طور پر مشکلات کا شکار ہیں ۔