کورونا کے مزید 16 مریض صحتیاب ہوئے ہیں، صوبے بھر میں صحتیاب ہونے والوں کی کُل تعداد 269 ہوگئی

کراچی  :  وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا ہے کہ آج مزید 16 مریض صحتیاب ہوئے ہیں، صوبے بھر میں صحتیاب ہونے والوں کی کُل تعداد 269 ہوگئی ہے جوایک اچھی خبر ہے۔ یہ بات انہوں نے آج اپنے جاری کردہ وڈیو بیان میں کہی۔ وزیراعلیٰ سندھ نے گذشتہ 24 گھنٹوں میں کورونا وائرس کی صورتحال سے متعلق عوام کو آگاہی دیتے ہوئے کہا کہ کل تک 9589 ٹیسٹ کئے گئے تھے اور آج مزید 634 ٹیسٹ کیے ہیں۔اب تک ہونے والے ٹیسٹ کی تعداد 10223 ہوگئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ کل تک 932 کورونا وائرس کے کیسز تھے جن میں مزید 54 کیسزآنے کے بعد کیسز کی تعداد 986 ہوگئی ہے۔ 253 مریض کل تک صحتیاب ہوگئے تھے جبکہ آج مزید 16 صحتیاب ہوئے ہیں۔ صحتیاب ہونے والوں کی تعداد 269 ہوگئی ہے جو اچھی خبر ہے۔ کل تک کورونا وائرس کے باعث ہلاک ہونے والے مریضوں کی تعداد 17 تھی جبکہ گذشتہ 24 گھنٹوں میں ایک اور ہلاکت کے ساتھ تعداد 18 ہوگئی ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ 396 مریض اپنے گھروں میں آئسولیشن میں ہیں،

ان 396 مریضوں کو ڈاکٹر علاج و معالجے کیلئے معاونت کررہے ہیں۔ 206 کورونا کے مریض سرکاری اور نجی اسپتالوں میں زیرعلاج ہیں۔ ہم آئسولیشن سینٹرز، سی سی یو، آئی سی یو کی تعداد بڑھا رہے ہیں اور اس کا مقصد یہ ہے کہ اپنی صلاحیت میں اضافہ کر سکیں۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ ہمارا ہیرو ڈاکٹر عبدالقادر سومرو کورونا کے مریضوں کا علاج کرتے ہوئے خود جان کی بازی ہار گئے۔ ڈاکٹر عبدالقادر کا ٹیسٹ 28 مارچ کو مثبت آیا تھا اور 31 مارچ کو اسپتال داخل ہوئے اور 6 اپریل کو ڈاکٹر عبدالقادر سومروخالق حقیقی سے جا ملے۔انہوں نے کہا کہ میں ڈاکٹر عبدالقادر کے خاندان اور ڈاکٹر برادری سے تعزیت کرتا ہوں۔ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے اپنے وڈیو پیغام میں کورونا وائرس پر کام کرنے والے ڈاکٹروں کو سلام پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ ڈاکٹرز فرنٹ لائن فائیٹرز ہیں اور ان کو ضروری حفاظتی لباس دینا ہماری ذمہ داری ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ ہم ڈاکٹروں کو پرسنل پروٹیکشن ایکیوپمینٹس کی فراہمی کو یقینی بنا رہے ہیں۔وزیراعلیٰ سندھ نے عوام سے اپیل کی کہ وہ گھروں میں رہیں۔ وزیراعلیٰ سندھ نے عوام کو دل کے مریض، سانس کے مریض، بزرگوں اور بچوں سے دور رہنے کی ہدایت بھی کی۔ وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ اللہ پاک کے حکم سے ہم جلد اس خطرے سے پار ہوجائیں گے۔