سفید پوش تاجروں کو اجتماعی خود کشی پر مجبور نہ کیا : کورنگی لانڈھی موبائل مارکیٹ ایسوسی ایشن کے چیئرمین شیخ محمد اکرم

کراچی  :  کرونا وائرس خطرات شہر کراچی لاک ڈاؤن چھوٹے طبقے کے تاجر فاقہ کشی پر مجبور کرونا وائرس کے خلاف وزیراعلیٰ سندھ کی کاوشوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں، سفید پوش تاجروں کو اجتماعی خود کشی پر مجبور نہ کیا جائے تفصیلات کے مطابق کورنگی لانڈھی موبائل مارکیٹ ایسوسی ایشن کے چیئرمین شیخ محمد اکرم نے کرونا وائرس خطرات اور وزیراعلیٰ سندھ کی کرونا کے خلاف کاوشوں کو سراہتے ہوئے الیکٹرانک اور موبائل سے منسلک چھوٹے طبقے کے تاجر برادری کی جانب سے بیان میں کہا ہے کہ کرونا کے خلاف آپ کی کاوشوں کو قدر کی نگاہ سے دیکھتے ہیں لیکن شہر کراچی میں ہرقسم کا کاروبار محدود وقت کے ساتھ ہورہا ہے پھر یہ پابندیاں صرف موبائل اور الیکٹرانک سے منسلک تاجروں کے ساتھ ہی کیوں کیا ہم پاکستانی نہیں کیا ہم ٹیکس ادا نہیں کرتے ہمارے بھی بچے ہیں۔

ہمیں کسی قسم کا بھیک نہیں چاہئیے کیا موبائل مارکیٹ میں کریانہ اسٹور سبزی کی دوکان دودھ کی دوکان اور میڈیکل اسٹوروں سے زیادہ رش ہوتا ہے ایسا بلکل نہیں ہے ہم بھی محدود وقت کے مطابق اپنا کاروبار جاری رکھنا چاہتے ہیں ہم اپنے اہل خانہ کے ساتھ زندہ رہنا چاہتے ہیں ہمیں بھی مقررہ وقت تک کاروبار کرنے کی اجازت دی جائے ورنہ ہم سفید پوش کرونا کے بجائے بھوک سے مرجائیں گے خدارا ہمیں اجتماعی خود کشی سے بچایا جائے کوئی بھی حکومتی نمائندہ یا کوئی ایسوسی ایشن ہماری آواز وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ تک موثر انداز میں پیش نہیں کرسکے کورنگی لانڈہی موبائل مارکیٹ ایسوسی ایشن کے چیئرمین شیخ محمد اکرم نے وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کمشنر کراچی افتخار شالوانی سے اپیل کی ہے کہ ہم کورنگی لانڈہی موبائل مارکیٹ میں کرونا وباء سے بچاؤ کی ہر تدابیر پر سختی سے عملدرآمد کروائیں گے سوشل ڈسٹینشن کی پالیسی پر عملدرآمد کریں گے الله تعالیٰ تمام انسانیت کو اس وباء سے محفوظ رکھے آمین یارب العالمین

اپنا تبصرہ بھیجیں