خود کو نیب کا افسر ظاہر کرنے والا شخص گرفتار

قومی احتساب بیورو (نیب) نے خود کو نیب کا ڈی جی ظاہر کرکے ‘سرکاری افسران سے غیرقانونی کام’ کروانے والے مشتبہ شخص کو گرفتار کرلیا۔ نیب کی جانب سے جاری پریس ریلیز میں کہا گیا کہ چیئرمین نیب جسٹس (ر) جاوید اقبال کی ہدایت پر ملزم محمد ندیم کو گرفتار کرکے پولیس کے حوالے کردیا گیا۔نیب نے اپنے بیان میں کہا کہ ‘گزشتہ 2 برس میں نیب کے جعلی افسران بن کر عوام الناس کو لوٹنے والے 9 افراد’ کو گرفتار کیا جا چکا ہے۔پریس ریلیز میں عوام سے درخواست کی گئی کہ ‘اگر کوئی جعلی افسر بن کر کسی کو ٹیلیفون پر رابطہ کرتا ہے تو اس کی اطلاع ترجمان نیب کو دی جائے’۔ خیال ہے کہ چیئرمین نیب کی جانب سے ٹیلی فون پر نیب کے کسی افسر کو کسی گواہ/ ملزم سے بات نہ کرنے کی ہدایت ہے۔نیب کے مطابق ‘نیب کو اگر کسی گواہ/ ملزم کو قانونی کارروائی کے لیے نیب میں بلانا مقصود ہو تو اسے خط لکھ کر بلایا جائے’۔ علاوہ ازیں پریس ریلیز میں چیئرمین نیب کے حوالے سے کہا گیا کہ ‘حتی المقدر کوشش کی جائے کہ نیب میں آنے والے ہر شخص سے مقررہ وقت پر ملاقات کی جائے اور اس کی عزت نفس کا قانون کے مطابق خیال رکھا جائے’۔ بیان میں کہا گیا کہ ‘اس سلسلہ میں کوئی کوتواہی برداشت نہیں کی جائے گی’۔

اپنا تبصرہ بھیجیں