وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی کی خیرپور میں کھلی کچہری

وزیر تعلیم و محنت سندھ سعید غنی خیر پور پہنچ گئے۔ صوبائی وزیر خیر پور میں وزیر اعلیٰ سندھ کی ہدایات پر منعقدہ کھلی کچہری میں عوامی مسائل سننے کے حوالے سے وہاں پہنچ گئے۔ صوبائی وزیر کے ہمراہ وزیر اعلیٰ سندھ کے معاون خصوصی سید ریاض شاہ، رکن سندھ اسمبلی منور وسان، ڈپٹی کمشنر نعیم سندھو، ایس ایس پی خیرپور عمیر طفیل اور دیگر بھی موجود ہیں۔ کچہری کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا بعد میں سانحہ سکھر ریلوے کے شہداء کے لئے فاتحہ خوانی کی گئی۔ میں گذشتہ ہونے والی کھلی کچہری میں بھی آیا اتھا اور اس دفعہ بھی میں نے تمام کے مسائل سنیں اور جو شکایات فوری حل طلب تھی اس کو حل کردیا گیا تھا۔

لیکن جہاں کچھ قانونی معاملات ہیں وہ ابھی حل طلب ہیں۔ سعید غنی۔ میں یہاں اس وقت تک موجود رہوں گا جب تک یہاں موجود ایک ایک کا مسئلہ نہ سن لوں. سعید غنی۔ ہمیں جانے کی کوئی جلدی نہیں ہے. سعید غنی۔ صوبائی وزیر نے کھلی کچہری کی کارروائی شروع ہونے سے قبل تمام محکموں کے افسران کی ایک ایک کا نام پکار کر حاضری چیک کرنے کی ڈی سی کو ہدایات دی۔ جتنے بھی سرکاری افسران اس کھلی کچہری میں نہیں آئے ان تمام کے خلاف کارروائی ہوگی۔ ڈی سی فوری طور پر ان تمام غیر حاضر سرکاری افسران کی رپورٹ بنا کر ایک کاپی چیف سیکرٹری کو ایک مجھے بھیج دیں ابھی ہی ان تمام کے خلاف کارروائی ہوگی. سعید غنی۔ گزشتہ کھلی کچہری میں 81 شکایات میں سے 24 کو مکمل طور پر حل جبکہ کئ ایک جلد ہی حل طلب ہیں البتہ وفاق کے تحت اداروں کی جانب سے کوئی اقدامات نہیں ہوئے. سعید غنی۔ ڈی سی فوری طور پر باقی مانندہ شکایات کے ازالے کے لئے ایک خط لکھیں اور ان سے 15 روز میں ان کی رپورٹ طلب کریں. سعید غنی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں