وفاقی کابینہ کااجلاس ، صدر مملکت کو اسلحہ لائسنس دینے کی منظوری

وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کااجلاس وزیراعظم ہاؤس میں ہوا ، جس میں وفاقی کابینہ نے 11نکاتی ایجنڈے پر غور کیا اور سیاسی اوراقتصادی صورت حال کا جائزہ لیا گیا۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ وفاقی کابینہ کو بجلی کی قیمتوں اور احساس پروگرام میں ارکان پارلیمنٹ کےکردار پر بریفنگ دی گئی جبکہ آڈٹ نگران بورڈکےممبران کے استعفوں،نئی تعیناتی ، ایگزم بینک پاکستان کےبورڈآف ڈائریکٹرز کی تعیناتی کی منظوری دے دی گئی۔

ذرائع کے مطابق اجلاس میں نیشنل سیکیورٹی ڈویژن کےرولزآف بزنس میں ترمیم ، دیامیربھاشاڈیم کی سیکیورٹی کےلیے433ممنوعہ بورلائسنس کی منظوری، صدرمملکت کوسیکیورٹی کےلیےاسلحہ لائسنس کی منظوری اور اسلام آبادکی انسدادمنشیات عدالت کےجج کی تعیناتی کی منظوری بھی دی گئی۔

دوران اجلاس میں نوازشریف کی سزامعطلی میں توسیع کے معاملے پر وزرا کی مختلف آرا سامنے آئی ، ذرائع کا کہنا ہے کہ کابینہ میں متعدد وزرا نےسزامعطلی کی مدت میں توسیع پرمشروط حمایت کی اور رائے دی کہ نواز شریف اسپتال داخل ہوتےتو مدت میں توسیع کردینی چاہیے، ڈاکٹرعدنان،عطاتارڑصرف حکومت سے وقت حاصل کررہے ہیں۔

وزرا نے رائے دی کہ مریم نوازنےعیادت کیلئےبیرون ملک سفر کیلئےعدالت سے رجوع کیا ہے، ہمیں عدالتی فیصلے کاانتظارکرناچاہیے جبکہ صوبائی کابینہ حتمی فیصلہ وفاقی کابینہ سے کرانے پر متفق ہوگئی۔

اپنا تبصرہ بھیجیں