حبیب بینک کی قبل از ٹیکس آمدنی میں گذشتہ سال کے دوران 34 فیصد اضافہ

حبیب بینک لمیٹڈ (ایچ بی ایل) کی2019 کے دوران قبل از ٹیکس آمدنی میں 34 فیصد اضافہ ہوا ہے، اس دوران بینک کو 28.9 ارب روپے کاعمومی منافع حاصل ہوا ہے۔ایچ بی ایل کے مالیاتی اعداد وشمار کے مطابق سال 2018 کے مقابلہ میں سال 2019 کے دوران قبل از ٹیکس آمدن میں 34 فیصد کے نمایاں اضافہ کے نتیجہ میں بینک کی فی حصص آمدنی بھی 8.22 روپے کے مقابلہ میں 10.45 روپے فی حصص تک پہنچ گئی۔حبیب بینک لمیٹڈ کے بورڈ آف ڈائریکٹرز نے سال سال 2019 کی مالیاتی کارکردگی کے اعلان کے ساتھ اپنے حصہ داروں کے لئے 12.5 فیصد یعنی 1.25 روپے فی حصص کے ڈیوڈنڈ کی منظوری بھی دی ہے جس سے دوران سال حصہ داروں کو دیئے گئے ڈیوڈنڈ کی مالیت 5 روہے فی حصص تک پہنچ گئی۔ حبیب بینک کی ان کامیابیوں کا سہرا چیئرمین سلطان الانہ اور صدر اورنگزیب اور ان کی ٹیم کے سر جاتا ہے ۔ دوسری طرف یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ ایف اے ٹی ایف کی کڑی شرائط کی وجہ سے پاکستان میں جن بینکوں کو بھاری جرمانے عائد کئے گئے ہیں ان بینکوں میں بھی حبیب بینک کا نام سرفہرست ہے ۔

اپنا تبصرہ بھیجیں