پنجاب فوڈ اتھارٹی کو ایک سال میں 22ہزار 110شکایات موصول

عوامی شکایات کا ازالہ،  ترجیحی بنیادوں پر کارروائیاں پنجاب فوڈ اتھارٹی کو ایک سال میں 22ہزار 110شکایات موصول،21ہزار181 کا مکمل ازالہ،929 پر کام جاری ہیلپ لائن سے 5ہزار265، وزیراعظم پورٹل سے 3ہزار183، سوشل میڈیا سے 974 شکایات موصولاوپن ڈور پالیسی کے تحت روزانہ کی بنیاد پر بھی براہ راست شکایات سنی جاتی ہیں۔عرفان میمنسوشل میڈیا پر فوری رسپانس کرنے پر فیس بک کی جانب سے موسٹ ایکٹو کا ٹیگ بھی مل چکا ہے۔ ڈی جی فوڈ اتھارٹی لاہور 18 فروری:عوامی شکایات کا ازالہ اولین ترجیح۔۔۔ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی عرفان میمن کی ہدایت پر ایک سال میں مختلف ذرائع سے موصول ہونے والی شکایات اور ازالے کی تفصیلات جاری کردی گئی ہیں۔تفصیلات کے مطابق پنجاب فوڈ اتھارٹی کو ایک سال میں عوام الناس کی جانب سے 22ہزار 110شکایات موصول ہوئی ہیں۔مختلف ونگز کی جانب سے 21ہزار 181 موصول ہونے والی شکایات کا مکمل ازالہ جبکہ 929 پر کام جاری ہے۔پنجاب فوڈ اتھارٹی کی ہیلپ لائن سے 5ہزار265، وزیراعظم پورٹل سے 3ہزار183 شکایات موصول ہوئیں۔اسی طرح ویب سائٹ اور موبائل اپلیکشن پر 7ہزار771، سوشل میڈیا سے 974  جبکہ براہ راست پنجاب فوڈ اتھارٹی دفاتر میں 4 ہزار 917 شکایات رجسٹرڈ کی گئیں۔ڈی جی فوڈ اتھارٹی کا کہنا تھا کہ شکایات درج کروانے کا طریقہ کار تمام ضلعی دفاتر میں نمایاں جگہ پر آویزاں کروایا گیا ہے۔ اوپن ڈور پالیسی کے تحت روزانہ کی بنیاد پر بھی براہِ راست شکایات سنی جاتی ہیں۔علاوہ ازیں سوشل میڈیا پر فوری رسپانس کرنے پر فیس بک کی جانب سے موسٹ ایکٹو کا ٹیگ بھی مل چکا ہے۔ شکایات پر لیے گئے ایکشن کی مکمل اپ ڈیٹ شکایت گزار کو بذریعہ ایس ایم ایس SMS بھی دی جاتی ہے۔عرفان میمن کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب فوڈ اتھارٹی شکایات کا فوری حل کرنے کے ساتھ ساتھ شکایات درج کروانے والوں کی حوصلہ افزائی بھی کرتی ہے۔                                        ٭٭٭٭٭٭٭٭٭٭

اپنا تبصرہ بھیجیں