اداکار قاضی واجد کی دوسری برسی فروری 2018 کو انتقال کرگئے تھے

شوبز

ممتاز
11اداکار قاضی واجد کی دوسری برسی فروری 2018 کو انتقال کرگئے تھے۔
۔
قاضی واجد نے 1956 میں ریڈیو پاکستان چائلڈ اداکار کی حیثیت سے اپنے طویل فنی سفر کا آغاز کیا۔
کراچی: کل ممتاز اداکار قاضی واجد کی دوسری برسی منائی گئی
1966 میں انہوں نے ڈرامہ ‘‘خدا کی بستی’’ میں اداکاری سے اپنے ٹیلی ویژن کا سفر شروع کیا۔ پاکستان کے مشہورومعروف اداکار قاضی واجد 26 مئی 1930 کو لاہور میں پیدا ہوئے، ان کی فنی زندگی کا آغاز ریڈیو پاکستان سے بطور ڈارمہ آرٹسٹ ہوا۔قاضی واجد اپنی زندگی کے 25 سال ریڈیو سے منسلک رہے جس کے بعد انہوں نے ڈرامہ انڈسٹری میں قدم رکھا۔
مرحوم قاضی واجد نے پاکستان ٹیلی ویژن کے متعدد ڈراموں سمیت فلموں میں بھی کام کیا اور اپنی صلاحیتوں کے جوہر دکھائے۔
قاضی واجد کے یادگار ڈراموں میں تنہائیاں، دھوپ کنارے، آنگن ٹیڑھا، خدا کی بستی، حوا کی بیٹی، تنہائیاں، پل دو پل اور تعلیم بالغاں، تنہا تنہا، دوراہے، یہ کیسی محبت شامل ہیں۔
حکومت پاکستان کی جانب سے ملک کے لیے بے پناہ خدمات پرقاضی احمد کو 14 اگست 1988 کو صدارتی تمغہ برائے حسن کارکردگی سے نوازا گیا تھا۔
قاضی واجدایک کثیرالجہد شخصیت تھے
قاضی واجد نے ان کہی، حوا کی بیٹی، چاند گرہن، تنہائیاں اور دھوپ کنارے سمیت 500 سے زائد سلسلہ وار ڈراموں میں کام کیا۔
1988 میں انہیں تمغہ حسن کارکردگی سے نوازا گیا۔
اپنے انتقال سے دور روز قبل بھی شوٹنگ میں مصروف تھے۔ ان کے انتقال کی خبر دنیا بھر میں پھیلے ان کے مداحوں پر بجلی بن کر گری
طارق اقبال’ کویت

اپنا تبصرہ بھیجیں