چھوٹی اسکرین کے بڑے اور بے مثال فنکار’ قاضی واجد

سب کو ایثار و محبت کا پیغام دینے والےچھوٹی اسکرین کے بڑے اور بے مثال فنکار قاضی واجدکو چاہنے والوں سے بچھڑے تین برس بیت گئے، ٹی وی اور ریڈیو کے لیے ان کی خدمات ہمیشہ یاد رکھی جائیں گی
قاضی واجد 26مئی 1930 کو لاہور میں پیدا ہوئے، انہوں نے اپنے کیریئر کا آغاز 1956میں ریڈیو پر چائلڈ صداکار کی حیثیت سے کیا تھا۔ اُن کے پروگرام ’قاضی جی کا قاعدہ‘ کو اُس دور میں غیر معمولی مقبولیت حاصل تھی۔

بعدازاں وہ ریڈیو پر ہی اسٹاف آرٹسٹ کی حیثیت سے وابستہ ہوگئے۔ قاضی واجد نے ایک سو سے زائد مختلف ڈراموں اور ڈرامہ سیریل میں پرفارم کیا۔ ’خدا کی بستی‘ ٹیلی ویژن پر اُن کی پہلی پرفارمنس تھی جس کا ’راجہ‘ ان کی شناخت بھی بن گیا۔

ان کے بہترین ڈراموں میںتنہائیاں، دھوپ کنارے، کرن کہانی، ہوائیں، حوا کی بیٹی اور دیگر شامل ہیں۔ انہوں نے ابتدائی دنوں میں تحریک آزادی پر مبنی فلم بیداری میں بھی کام کیا تھا۔
قاضی واجد کو ان کی فنی خدمات کے اعتراف میں 1988میں حکومت نے پرائڈ آف پرفارمنس کے اعزاز سے نوازا، اس کے علاوہ انہیں 12 ویں سرکاری ٹی وی ایوارڈ میں بہترین اداکار کا ایوارڈ بھی دیا گیا تھا۔

انہوں نے بیرون ملک بھی مختلف شہروں میں اسٹیج ڈراموں میں پرفارم کیا ۔

واضح رہے کہ قاضی واجد 11 فروری 2017ء کو 87 برس کی عمر میں دل کا دورہ پڑنے کی وجہ سے کراچی میں انتقال کرگئے تھے

اپنا تبصرہ بھیجیں