ڈاؤ یونیورسٹی میں اسپورٹس ویک کا آغاز

کراچی07فروری 2020:ڈاؤ یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز کے وائس چانسلر پروفیسر محمد سعید قریشی نے کہا ہے کہ صحت مند سرگرمیوں کی  حوصلہ افزائی  ڈاؤ یونیورسٹی کی روایت ہے، ڈاؤ یونیورسٹی اپنی روایت کے مطابق کئی برسوں سے یہ مقابلے منعقد کرارہی ہے، اس مرتبہ یہ مقابلے پچھلے مقابلوں کی نسبت بہتر انداز میں دیکھے جائیں گے، اسپورٹس کمیٹی بھرپور انداز میں یہ مقابلے منعقد کراتی ہے، جس میں طلبہ پر جوش انداز میں حصہ لے رہے ہیں، جس سے نہ صرف ان کی صلاحیتیوں میں اضافہ ہوتا ہے، بلکہ پڑھائی کے دباؤ سے بھی سکون میسر آتا ہے، اسپورٹس کمیٹی نے اپنے محدود وسائل کے باوجود ان مقابلوں کومنعقد کرایا، جو قابلِ تحسین ہے،، یہ باتیں انہوں نے اوجھا کیمپس میں واقع جمنازیم میں سالانہ اسپورٹس ویک کی افتتاحی تقریب سے بطور مہمانِ خصوصی خطاب کرتے ہوئے کہی، اس موقع پر یونیورسٹی کے پرو وائس چانسلر ز پروفیسر کرتار ڈاوانی، پروفیسر زرناز واحد رجسٹرار ڈاؤ یونیورسٹی پروفیسر امان اللہ عباسی، ڈائریکٹر اسپورٹس پروفیسر مکرم علی، ڈاؤ میڈیکل کالج کے پرنسپل پروفیسرامجد سراج میمن، پروفیسر نبیلہ سومرو، پروفیسر سنبل شمیم، پروفیسر امرینہ قریشی،پروفیسر شاہین شرافت، پروفیسر شہلہ نعیم ظفر، پروفیسر نثار احمد راؤ، ڈاکٹر شوکت علی سمیت سینئر فیکٹی ممبرز اور طلبہ کی بڑی تعداد نے شرکت کی۔پروفیسر سعید قریشی نے کہا کہ ان مقابلوں میں طلبہ کے ساتھ فیکلٹی میمبرز بھی اپنی ٹیموں کے ساتھ شرکت کریں گے، انہو ں نے کہا کہ اسپورٹس طلبہ کی زندگی میں نہایت اہمیت کا حامل ہے،جس سے انہیں زندگی میں برداشت اور رواداری قائم رکھنے میں مدد ملتی ہے،یونیورسٹی کے ایام طلبہ کے لیے ہمیشہ یاد گار ہوتے ہیں، ہر سال کھیلوں کی ان سرگرمی کے ذریعے ہم اپنے طلبہ کے مابین باہمی میل جول اور سماجی تعلقات کو پروان چڑھاتے ہیں، تاکہ صحت مند سرگرمیوں کے ذریعے ایک دوسرے سے تعارف حاصل کریں، ہم طلبہ کو ایک خوشگوار ماحول فراہم کرتے ہیں، تاکہ وہ ان دنوں کو مزید خوبصورت اور یاد گار بناسکیں، اپنے خطاب کے آخرمیں انہوں نے بہترین مقابلوں کے انعقاد پر ڈائریکٹر اسپورٹس پروفیسر سید علی اور انکی ٹیم کی تعریف کی۔ پروفیسر سید مکرم علی نے اس موقع پر خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ڈاؤ یونیورسٹی کے 13انسٹی ٹیوٹس کے درمیان مقابلوں میں 3500طلبا و طالبات پر مشتمل ٹیمیں حصہ لے رہی ہیں،جبکہ 200فیکلٹی ممبزر بھی ان مقابلوں میں شریک ہونگے۔ اسپورٹس ویک کے باضابطہ آغاز ہوچکا ہے، اس سے پہلے بھی سائیڈ میچز کھیلے گئے،، انہوں نے بتا یا کہ 6کوآرڈینیٹرز، 17ایونٹ انچارج، 35فوکل پر سنز نے ان مقابلوں کاا نعقاد کو ممکن بنایا،انہوں نے مزید کہا کہ ہم ان مقابلوں میں بہترین طلبہ کو آئندہ ہونے والے بین الایونیورسٹز مقابلوں کے لیے منتخب کرتے ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ جس طرح اسپورٹس مقابلوں کے دوران طلبہ اسپورٹس میں اسپرٹ کا مظاہرہ کرتے ہیں، اپنی پیشہ وارانہ زندگی میں بھی اس پر عمل کریں۔بعد ازاں پروفیسر محمد سعید قریشی نے ربن کاٹ کر سالانہ اسپورٹس ویک کا رسمی افتتاح کیا، جبکہ تقریب کے آخر میں وائس چانسلر پروفیسر سعید قریشی نے اسپورٹس ویک کی کامیابی میں کردار اداکرنے والے ہیڈ آف انسٹیٹیوٹس سمیت دیگر اساتذہ میں شیلڈز تقسیم کیں۔


اپنا تبصرہ بھیجیں