چوہدری برادران پنجاب حکومت گرانے کو تیار

چوہدری برادران پنجاب حکومت گرانے کو تیار، ق لیگ پنجاب میں پاکستان تحریک انصاف کی حکومت کو گرانے کے لیے نواز شریف صاحب کے اشارے کی منتظر ہے۔ تفصیلات کے مطابق ایک نجی ٹی وی چینل کو انٹرویو دیتے ہوئے سینئر صحافی ڈاکٹر شاہد مسعود نے انکشاف کیا ہے کہ چوہدری برادران پنجاب حکومت کو گرانے کے لیے نواز شریف کے اشارے کے منتظر ہیں۔
انھوں نے کہا کہ اس حوالے سے ق لیگ کا کوئی نہ کوئی فرد لندن میں نواز شریف سے ملاقات کریگا، یا لندن سے شہباز شریف ان سے ملاقات کے لیے آئینگے۔ انکا مزید کہنا ہے کہ عمران خان کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ میں کوئی بات نہیں کرونگا۔ واضع رہے کہ سپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الٰہی نے موقف اپنایا تھا کہ وہ وزیراعظم عمران خان سے ملنے نہیں جائینگے۔انکا کہنا تھا کہ پنجاب میں گورننس کے شدید مسائل ہیں، پی ٹی آئی کے لوگ بھی مسائل کے لیے ہمارے پاس آتے ہیں۔ پنجاب میں حکومت کرنے کی خبریں پہلے بھی بہت زیادہ گردش میں تھیں۔ اس سے قبل ذرائع کا کہنا تھا کہ لندن میں ہونے والے اجلاس میں یہ فیصلہ کیا گیا تھا کہ مسلم لیگ ن کا نیا ہدف وفاق نہیں ہو گا بلکہ تمام تر توجہ پنجاب کی طرف ہوگی۔ پنجاب میں حکومت بنا لینے کےبعد مرکز میں حکومت بنائی جائیگی۔
ذرائع کے مطابق اجلاس میں یہ بتایا گیا تھا کہ مرکز میں حکومت بنانا مشکل ہے جبکہ پنجاب میں اس پر کام آسان ہو جائیگا۔ مسلم لیگ ن کا کہنا تھا کہ وہ پنجاب کے سیاسی اور انتظامی معاملات کی باریکیوں کو خوب جانتی ہے اور صوبے میں ان ہاؤس تبدیلی وفاق کے مقابلے میں آسان ہوسکتی ہے۔ذرائع کا مزید کہنا تھا کہ پنجاب میں حکومت بنائی جائے تو وفاق میں موجودہ حکومت کو ٹف ٹائم دیا جاسکتا ہے، پنجاب میں تبدیلی کے بعد مرکز میں بھی تبدیلی کا جائزہ لیا جائیگا۔

اپنا تبصرہ بھیجیں