انڈر۔19 ورلڈکپ سیمی فائنل: بھارت نے پاکستان کو 10 وکٹوں سے ہرادیا

انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) انڈر۔19 کرکٹ ورلڈ کپ کے پہلے سیمی فائنل میں بھارت نے پاکستان کو باآسانی 10 وکٹوں سے شکست دے کر فائنل کے لیے کوالیفائی کرلیا۔

پاکستان نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے روایتی حریف بھارت کو 173 رنز کا ہدف دیا، جو اُس نے بغیر کوئی وکٹ گنوائے 36ویں اوور میں حاصل کرلیا۔

یشاسوی جیسوال نے ناقابل شکست 105 اور دیویانش سکسینا نے 59 رنز بنائے۔

پوشیفسٹروم میں کھیلے گئے سیمی فائنل میں بیٹسمینوں کی ناقص کارکردگی کے باعث پاکستان ٹیم کی پوری ٹیم صرف 172 رنز بناسکی، جواب میں بھارتی اوپنرز نے عمدہ بیٹنگ کرتے ہوئے ہدف 35.2 اوورز میں حاصل کرلیا۔
اس سے پہلے پاکستانی کپتان روحیل نذیر نے ٹاس جیت کر بیٹنگ کا فیصلہ کیا، لیکن اوپنرز اچھا آغاز فراہم نہیں کرسکے۔

محمد ہریرہ 4 رن بنا کر آؤٹ ہوگئے۔ اُس وقت ٹیم کا مجموعی اسکور صرف 9 رنز تھا۔ نئے آنے والے بیٹسمین فہد منیر بغیر کھاتہ کھولے پویلین لوٹ گئے۔

ابتدائی نقصان کے بعد تیسری وکٹ پر حیدر علی اور کپتان روحیل نذیر نے 62 رنز کی شراکت بنائی اور ٹیم کا اسکور 96 تک پہنچادیا، لیکن حیدر علی 77 گیندوں پر 9 چوکوں کی مدد سے 56 رنز کی اننگز کھیل کر روحیل نذیر کا ساتھ چھوڑ گئے۔

قاسم اکرم 9 کے اسکور پر رن آؤٹ ہوئے، محمد حارث نے ایک چھکے اور ایک چوکے کی مدد سے 21 رنز بنائے، لیکن وہ بھی بڑا اسٹروک کھیلنے کی کوشش میں کیچ آؤٹ ہوگئے۔

عرفان خان 3 اور عباس آفریدی 2 رنز بناسکے، 169 کے مجموعی اسکور پر کپتان روحیل نذیر بھی 62 رنز بناکر پویلین لوٹ گئے۔

طاہر 2 اور عامر علی ایک رن بناسکے، یوں پاکستان کی پوری ٹیم 45.1 اوور میں 172 رنز بناکر آؤٹ ہوگئی تھی۔

بھارت کی جانب سے ششانت نے 3، روی بشنوئی اور کارتک تیاگی نے دو، دو کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا۔

پاکستان ٹیم کی قیادت وکٹ کیپر بیٹسمین روحیل نذیر کر رہے تھے، ٹیم کے دیگر کھلاڑیوں میں حیدر علی، محمد فہد منیر، محمد عباس آفریدی، محمد حارث، محمد عرفان خان، عامر علی تھہیم، قاسم اکرم، محمد ہریرہ، عامر خان اور طاہر حسین شامل تھے۔

بھارتی ٹیم کپتان پریام گرگ، وکٹ کیپر دھورو چند جریل، یشاسوی جیسوال، تلک ورما، سدیش ویر، روی بشنوئی، آکاش سنگھ، کارتک تیاگی، اتھروا انکولیکر اور ششانت مشرا پر مشتمل تھی

اپنا تبصرہ بھیجیں