کراچی آرٹس کونسل میں جاری دوسرے ادبی میلے میں نامور مصنفین کی مختلف کتابوں کی رونمائی

کراچی :  آرٹس کونسل پاکستان کراچی میں جاری تین روزہ ادبی میلے کے دوسرے روز تیرہ مختف موضوعات پر مبنی مختلف مصنفین کی کتابوں کی رونمائی کی گئی۔معروف مصنف طارق کھوسہ کی کتاب کی رونمائی میں سابق گورنر سندھ محمد زبیر نے شرکت کی۔اجلاس کی صدارت معروف صحافی مظہر عباس نے کی۔ اس موقع پر سابق گورنر سندھ محمد زبیر نے کہا کہ لوگ کہتے ہیں کی ملک میں امن نواز شریف نے نہیں راحیل شریف نے کیا، فوج نے تب کیوں ایکشن نہ لیا جب جی ایچ کیو کا حملہ ہوا۔ انہوں نے کہا کہ سیاسی مرضی کے بغیر یہ امن ممکن نہیں تھا۔سابق گورنر کا کہنا تھا کہ میں یہاں کھل کر بات نہیں کر سکتا۔ اگر کروں گا تو کہا جائے گا کہ ہم مفاہمت کی طرف جا رہے ہیں۔ اس موقع پر سابقہ وزیر داخلہ پر تنقید کرتے ہوئے محمد زبیر کا کہنا تھا کہ ہمارے دور کے وزیر داخلہ فوج کے قریب تھے۔جس کی وجہ سے وہ ہم سے لڑتے تھے۔اس موقع پر مصنف طارق کھوسہ نے کہا کہ آرمی چیف جنرل باجوہ نے واضح کر دیا ہے کہ فوج اور عسکریت پسندوں میں کوئی رابطہ نہیں ہو گا۔ان جہاد اور پراکسی کی گنجائش نہیں ہے۔ طارق کھوسہ نے مزید کہا کہ عوام پر توجہ دیں تو ملک سیکیورٹی کے بجائے فلاحی ریاست ہو جائے۔

کیٹاگری میں : ادب

اپنا تبصرہ بھیجیں