او آئی سی کا بھارت میں متنازع شہریت بل اور مسلم دشمن اقدامات پر اظہار تشویش

او آئی سی کا بھارت میں متنازع شہریت بل اور مسلم دشمن اقدامات پر اظہار تشویشاو آئی سی کی جانب سے جاری اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ او آئی سی بھارت میں حالیہ متنازع بل کے بعد اقلیتوں کے ناگفتہ بہہ حالات کو دیکھ رہی ہے، مسلمانوں کو شہریت سے محروم رکھنے اور بابر مسجد کے حوالے سے فیصلے پر شدید تحفظات ہیں ،بھارت کو اقوام متحدہ کے چارٹرڈ کی خلاف وزری سے باز آنا چاہیئے ،بھارت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ مسلمانوں کی جانوں اور عبادت گاہوں کا تحفظ یقینی بنائیں ۔
او آ ئی سی اعلامیے کے مطابق اقوام متحدہ کا چارٹڈ اقلیتوں کے تحفظ کی ضمانت دیتا ہے ، بھارت اقوام متحدہ کے چارٹڈ کا پاس رکھنے کا پابند ہے اقوام متحدہ کے چارٹڈ کے خلاف کوئی بھی اقدام مزید عدم و استحکام پیدا کرے گا ، اقوام متحدہ کے چارٹڈ کے منافی اقدامات خطے کے امن و امان کو داؤپر لگا دے گا ۔
واضح رہے کہ نئے بھارتی شہریت قانون کیخلاف جاری مظاہروں میں پولیس تشدد کے سبب اب تک 24 افراد جاں بحق جبکہ 2 سو سے زائد افرادزخمی ہوچکے ہیں