سندھ اسمبلی میں متعدد توجہ دلاﺅ نوٹس متعلقہ وزیر اور پارلیمانی سیکریٹری بلدیات نہ ہونے پر موخر کردیئے گئے

کراچی : سندھ اسمبلی میں جمعرات کومتعدد توجہ دلاﺅ نوٹس متعلقہ وزیر اورپارلیمانی سیکریٹری بلدیات نہ ہونے پر موخر کردیئے گئے ۔ایم ایم اے کے رکن سید عبدالرشید ایک سرکاری اسپتال پر توجہ دلاﺅ نوٹس پیش کرنا چاہتے تھے لیکن وزیر پارلیمانی امور مکیش کمار چاﺅلہ نے کہا کہ وزیر موجود نہیں اور پارلیمانی سیکریٹری کو بخار آگیا ہے تو وہ چلے گئے ہیں۔ پی ٹی آئی کے رکن شاہ نواز جدون نے اپنے توجہ دلاﺅ نوٹس پر کہا کہ مچھر کالونی سمیت حلقے میں عطائی ڈاکٹرز کے باعث محکمہ صحت اور ڈرگ انسپکٹر پولیس کی نگرانی میں چل رہے ہیں۔

وزیر صحت نے مسئلے کے حل کی یقین دہانی کرات ہوئے کہا کہ اس سلسلے میں اقدامات کئے جارہے ہیں ۔ ایوان نے اپنی کارروائی کے دوران رکن اسمبلی ندا کھوڑو کی تحریک التوا جوکاروبار میں وسیع عدم توازن امپورٹ میں اضافہ اور ایکسپورٹ میں کمی سے متعلق ہے اسے بحث کے لئے منظور کرلیا اورآئندہ ہفتے بحث کے لیے دو گھنٹے کا وقت مختص کردیا گیا۔بعدازاں سندھ اسمبلی کا اجلاس جمعہ کو دوپہر دو بجے تک ملتوی کردیا گیا۔