پرویز مشرف کی لاش کو تین دن تک ڈی چوک پر لٹکایا جائے، عدالت

اسلام آباد میں پرویز مشرف کو سزائے موت سنانے والی خصوصی عدالت نے تفصیلی فیصلہ جاری کر دیا ہے۔ فیصلہ جسٹس وقار احمد سیٹھ نے تحریر کیا ہے جو 125 صفحات پر مشتمل ہے جبکہ جسٹس نذر اکبر نے 44 صفحات پر مشتمل اختلافی نوٹ لکھا ہے۔
فیصلے کے مطابق قانون نافذ کرنے والے ادارے پرویز مشرف کو گرفتار کرنے ک بھرپور کوشش کریں، قانون نافذ کرنے والے ادارے مشرف قانون کے مطابق سزا دلوانے کو یقینی بنائیں،
اگر پرویز مشرف سزا سے قبل وفات پا جاتے ہیں تو انکی لاش کو تین دن تک ڈی چوک لٹکایا جائے اس سے قبل جمعرات کی صبح خصوصی عدالت کے رجسٹرار راؤ عبدالجبار نے میڈیا کو بتایا کہ تحریری فیصلہ صرف مجرم کے وکلا اور نمائندے جو فراہم کیا جائے گا، میڈیا کو دینے کی اجازت نہیں۔فیصلہ کی کاپی حاصل کرنے کے لئے مشرف کا نمائندہ خصوصی عدالت پہنچ گیا جبکہ خصوصی عدالت کا عملہ بھی موجود ہے report-by-Pakistan24.tv-
خصوصی عدالت کی جانب سے سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کے خلاف سنگین غداری کیس میں سزائے موت کا تفصیلی فیصلہ جاری کردیا گیا۔ تفصیلی فیصلے کی کاپیاں نمائندہ وزارتِ داخلہ اور پرویز مشرف کے نمائندے کے حوالے کر دی گئی ہے جو انہیں لے کر روانہ ہو گئے۔



اپنا تبصرہ بھیجیں