برطانوی موسیقار جان لینن کاچشمہ 2لاکھ ڈالرمیں فروخت

موسیقی کی دنیا میں جان لینن کے اس چشمے کو ہمیشہ بے حد مقبولیت حاصل ہوئی اور یہ ان کی انفرادیت کی پہچان بنا ۔ فرانسیسی خبر رساں اداے کے مطابق یہ دھوپ کا چشمہ ایلن ہیئرنگ کا ہے، جو جان لینن کے بینڈ ممبر جارج ہیریسن اور رِنگو کے ڈرائیور رہ چکے ہیں ۔ جان لینن ایک بار اس چشمے کو ایک گاڑی کی پیچھے والی سیٹ پر رکھ کر بھول گئے تھے۔ یہ چشمہ ان تک کیسے پہنچا اس حوالے سے ایلن ہیئرنگ کا کہنا تھا کہ ‘ 1968 میں ایک دن وہ ڈرم بجانے والے رِنگو کی گاڑی میں انہیں، جان اور جارج کو لینے گئے، جس کے بعد انہوں نے ان تینوں کو دفتر چھوڑا’۔
انہوں نے مزید بتایا کہ ‘ جب جان لینن گاڑی سے اترے تو مجھے لگا کہ وہ اپنا چشمہ پیچھے سیٹ پر بھول گئے ہیں، اگرچہ یہ ٹوٹ چکا تھا، میں نے لینن سے پوچھا کہ کیا میں انہیں ٹھیک کروالوں تو اس پر انہوں نے مجھے بتایا تھا کہ پریشان ہونے کی ضرورت نہیں یہ بس منفرد نظر آنے کے لیے تھے۔
ایلن ہیئرنگ کے مطابق انہوں نے اس ٹوٹے ہوئے چشمے کو کبھی ٹھیک نہیں کروایا اور اس ہی حالت میں نیلامی کے لئے رکھ دیا جسے ایک شخص نے خرید لیا ۔ایلن ہیئرنگ یہ تمام چیزیں اب بھی اپنے پاس رکھنا چاہتے تھے لیکن اپنے خاندان اور مالی صورتحال کو مدنظر رکھتے ہوئے انہوں نے اسے نیلام کردیا۔
یاد رہے کہ 8 دسمبر 1980 میں جان لینن کو نیو یارک میں ان کے اپارٹمنٹ کے باہر ایک پرستار نے گولی مار کر ہلاک کر دیا تھا ۔