سندھ حکومت کے مختلف محکموں میں فوتی کوٹے پر 273 ملازمتوںکی منظوری دے دی گئی

سندھ حکومت کے مختلف محکموں میں فوتی کوٹے پر 273 ملازمتوںکی منظوری دے دی گئی۔
 
رواں سال 2019 میں اب تک 3038 فوتی کوٹہ پر مختلف محکموںمیں ملازمتوں کی دی گئی ہے۔
 
کراچی (12 دسمبر 2019 (چیف سیکریٹری سندھ سید ممتاز علی شاہ کیزیر صدارت فوتی کوٹہ پر عملدرآمد کے متعلق اہم اجلاس سندھ سیکریٹریٹ میں منعقد ہواجس میں مختلف محکموں میں فوتی کوٹے پر 273 ملازمتوں کی منظوری دے دی گئی۔  اجلاس میں اسکول ایجوکیشن کے 81،  محکمہ پولیس میں 9 ، محکمہ صحت 10، بورڈ آف روینیومیں 13 ملازمتوں کی منظوری دی گئی۔ محکمہ زراعت میں 19، اوقاف میں 3، آبپاشی کے52، بلدیات کے 20، پبلک ہیلتھ انجینئرنگ میں 11 ملازمتوں کی منظوری دی گئی۔محکمہ پاپولیشنمیں 13، لائیو اسٹاک میں 13، کالیج ایجوکیشن میں 3، ثقافت میں 2، ورکس اینڈ سروسز میں13 ملازمتوں کی منظوری دی گئی۔
 تفصیلات کے مطابق رواں سالجنوری 2019 سے کے کر دسمبر 2019 تک مختلف محکموں میں 3038 فوتی کوٹہ پر ملازمتوں کیمنظوری بدی گئی ہے۔ اجلاس میں مختلف محکموں کے سیکریٹریز نےبتایا کے فوتی کوٹہ پر منظور بھرتیاں ڈسٹرک رکروٹمنٹ کمیٹی میں زیر التوا کا شکار ہیں۔چیف سیکریٹری سندھ نے ایڈیشنل سیکریٹری سروسز سعید احمد شیخ کو ہدایت کرتے ہوئے کہاکہ ڈسٹرکٹ رکروٹمنٹ کمیٹی میں زیر التوا فوتی کوٹہ کیسز کے متعلق رپورٹ پیش کی جائے۔چیفسیکریٹری سندھ نے کہا کے فوتی کوٹہ پر بھرتیوں کے عمل کو شفاف بنایا جائے۔ فوتی کوٹہپر بھرتیوں میں کسی قسم کی تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔ ہر 15روز میں فوتی کوٹہ پرعملدرآمد کی رپورٹ پیش کی جائے۔ انہونے تمام ڈپٹی کمشنر وقت پر ڈسٹرکٹ ریکروٹمنٹکمیٹی کے اجلاس بلا کر مسائل حل کرنے کی ہدایات کی۔ اجلاس میں سینیئر میمبر بورڈ آفریونیو قاضی شاہد پرویز، سیکریٹری زراعت آغا ظہیر، سیکریٹری ایکسائیز عبد الحلیم شیخ, سیکریٹری جنگلات عبدالرحیم سومرو ، سیکریٹری صحت زاہد عباسی، ایڈیشنلسیکریٹری سروسز سعید احمد شیخ سمیت متعلقہ افسران نے شرکت کی

اپنا تبصرہ بھیجیں