اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا شہید بینظیر بھٹو کی زندگی پر لکھی گئی کتاب کی تقریب رونمائی سے خطاب

اسلام آباد: پاکستان پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کا شہید بینظیر بھٹو کی زندگی پر لکھی گئی کتاب کی تقریب رونمائی سے خطاب

میری والدہ کو لکھنے میں بہت مہارت تھی، بلاول بھٹو

میری والدہ نے شہید مرتضی بھٹو اور شہید شاہنواز بھٹو کی شہادت پر تحریریں لکھیں، بلاول بھٹو

جب میری والدہ شہید ہوئیں تو لوگوں کی توقع تھی کہ میں اس المیے پر کچھ لکھوں، بلاول بھٹو

آج تیرہ برس ہوچکے ہیں، مجھ میں حوصلہ نہ آسکا کہ والدہ کی شہادت پر کچھ لکھ سکوں، بلاول بھٹو

میں ایک بیٹا بھی ہوں، اپنی والدہ کی شہادت پر کچھ لکھنا بہت مشکل ہے، بلاول بھٹو

یشار سلیمان نے شہید بے نظیر بھٹو کی زندگی اور شہادت پر کتاب لکھ کر شان دار کام کیا ہے، بلاول بھٹو

پاکستان میں شہید بینظیر بھٹو کا نام مٹانے کی کوشش کی جارہی ہے، بلاول بھٹو

اسلام آباد ائیرپورٹ کا نام بدل کر شہید بینظیر بھٹو کا نام مٹانے کی کوشش کی گئی، بلاول بھٹو

بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کا نام تبدیل کرنے کی کوشش کی گئی، بلاول بھٹو

ائیرپورٹ اور دیگر منصوبوں سے شاید آپ شہید بینظیر بھٹو کا نام مٹادو مگر عوام کے دلوں سے نہیں مٹایا جاسکتا، بلاول بھٹو

میں نے اپنی آنکھوں سے دیکھا کہ انہوں نے اپنی زندگی کے ہر دن جدوجہد کی، بلاول بھٹو

شہید بینظیر بھٹو کے خلاف فتوے دئیے گئے کہ عورت وزیراعظم نہیں بن سکتی، بلاول بھٹو

کہا گیا کہ اگر آپ شہید بینظیر بھٹو کو ووٹ دوگے تو آپ کا نکاح ٹوٹ جائیگا، بلاول بھٹو

شہید بینظیر بھٹو نے تمام قوتوں کو شکست دی اور وہ وزیراعظم بنیں، بلاول بھٹو

1988میں صدر آصف زرداری کو کہا گیا کہ وہ وزیراعظم بن جائیں کیونکہ خواتین حکمران نہیں بن سکتیں، بلاول بھٹو

سابق صدر آصف زرداری نے جواب دیا کہ ایسا کیسے ہوسکتا ہے، عوام بینظیر بھٹو کو وزیراعظم دیکھنا چاہتے ہیں، بلاول بھٹو

فیمنزم کا مطلب عورت اور مرد کو برابر کے حقوق دینا ہے اور شہید بینظیر بھٹو کی بھی یہی جدوجہد تھی، بلاول بھٹو

شہید بینظیر بھٹو نے دکھایا کہ عورتیں وہ کرسکتی ہیں جو شاید مرد بھی نہ کرسکے، بلاول بھٹو

شہید بینظیر بھٹو نے ضیاء کی جیل میں رہنا قبول کیا مگر ملک سے باہر نہیں گئیں، بلاول بھٹو

سکھر جیل میں شہید بینظیر بھٹو ٹھنڈے پانی سے انکار کرتی تھیں کہ پہلے میرے کارکنوں کو ٹھنڈا پانی دیا جائے، بلاول بھٹو

آج انقلابی شعر پڑھنے والے بڑے بڑے لیڈر بن چکے ہیں، بلاول بھٹو

آج ذرا سا بھی پولیس ایکشن ہو تو یہ لیڈر کہلانے والے گھروں سے بھاگ جاتے ہیں، بلاول بھٹو

آج ان لیڈر کہلانے والوں کے کارکنان پر تشدد ہو تو وہ کہیں نظر نہیں آتے، بلاول بھٹو

شہید بے نظیر بھٹو نے ہمیشہ فرنٹ سے قیادت کی، انہوں نے آنسو گیس کا سامنا کیا، لاٹھیاں کھائیں، بلاول بھٹو

آج کنٹینر میں بیٹھوا کر لانگ مارچ کروائے جاتے ہیں، بلاول بھٹو

جب انتہاپسندوں کے خلاف بات کرتے ہوئے وردی میں آمر خوفزدہ تھا تو وہ ایک عورت تھی جو اٹھ کھڑی ہوئی، بلاول بھٹو

آج تو یہ حال ہوگیا ہے کہ کہا جاتا ہے کہ یوٹرن لئے بغیر کوئی لیڈر نہیں بنتا، بلاول بھٹو

ہمیں تو سکھایا گیا ہے کہ اپنے مؤقف اور نظریات پر ڈٹے رہو یہانتکہ شہادت کیوں نہ قبول کرنا پڑے، بلاول بھٹو

ایک سوچی سمجھی سازش کے تحت پاکستان کے ترقی پسندوں کی کردار کشی کی گئی، بلاول بھٹو

شہادت کے بعد جب وہ خود جواب دینے کیلئے موجود نہ تھے، ترقی پسند لیڈروں کی کردار کشی کی گئی، بلاول بھٹو

کرپٹ کرپٹ کی رٹ لگا کر نوجوانوں کا برین واش کرنے کی کوشش کی گئی، بلاول بھٹو

کرپٹ لوگ یوٹرن لیتے ہیں اور بھاگ جاتے ہیں، بلاول بھٹو

جو عوام کو حقوق نہیں دیتے، وہ اشرافیہ کرپٹ ہے، ترقی پسندوں کی قیادت کرپٹ نہیں، بلاول بھٹو