پی آئی سی واقعہ کی تمام پہلوئوں کو مد نظر رکھ کر تحقیقات جاری ہیں

پی آئی سی واقعہ کی تمام پہلوئوں کو مد نظر رکھ کر تحقیقات جاری ہیں ‘ چیئر پرسن قائمہ کمیٹی داخلہ یاسمین راشد ،فیاض الحسن اپنی جان خطرے میں ڈال کر حالات کنٹرول کرنے کیلئے موقع پر پہنچے ‘ مسرت چیمہ
لاہور(                  ) چیئر پرسن قائمہ کمیٹی برائے داخلہ مسرت جمشید چیمہ نے کہا ہے کہ پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی واقعہ کی تمام پہلوئوں کو مد نظر رکھ کر تحقیقات جاری ہیں اور اس کے حقائق سے عوام کو آگاہ کیا جائے گا ،اگر حکومت اور انتظامیہ بروقت اقدامات نہ اٹھاتی توخدانخواستہ بڑے پیمانے پر نقصان ہو سکتا تھا ، اس واقعہ کی جتنی بھی مذمت کی جائے وہ کم ہے کیونکہ اس طرح کے واقعات پر کسی طرح کی پردہ پوشی نہیں کی جا سکتی ۔ میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے مسرت جمشید چیمہ نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان اور وزیراعلیٰ پنجاب سردار عثمان بزدار نے فوری اس واقعہ کا نوٹس لیا اور وزیر اعلیٰ پنجاب اسلام آباد میں تمام تر مصروفیات ترک کر کے ہنگامی طو رپر لاہور پہنچے اور اس دوران وہ صوبائی وزراء اور انتظامیہ سے مسلسل رابطے میں رہے ۔ ڈاکٹر یاسمین راشد اور فیاض الحسن چوہان نے انتہائی جراتمندانہ کردار ادا کیا او ر اپنی جان خطرے میں ڈال کر حالات کو کنٹرول کرنے کیلئے موقع پر پہنچے حالانکہ ماضی میں اس طرح کی کوئی بھی مثال موجود نہیں ۔ انہوں نے کہا کہ وکلاء کی جانب سے اٹھائے گئے انتہائی اقدام پرہر شعبہ زندگی سے تعلق رکھنے والے افراد کی جانب سے مذمت کی جارہی ہے ، خود وکلاء رہنمائوں نے کہا ہے کہ اس واقعہ سے ہمارے سر شرم سے جھک گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ سوشل میڈیا میں بہت سے چیزیں کھل کر سامنے آرہی ہیں اس لئے اس واقعہ کی تمام پہلوئوں کو مد نظر رکھ کر تحقیقات جاری ہیں ۔ خود وکلاء رہنمائوں نے کہا کہ وکلاء کی آڑ میں سیاسی کارکن بھی اس میں شامل ہو ئے ۔ مسرت جمشید چیمہ نے کہا کہ علاج معالجہ معطل ہونے سے جاں بحق ہونے والے افراد کے اہل خانہ کے غم میں برابر کے شریک ہیں اور حکومت انہیں تنہا نہیں چھوڑے گی ۔                                                       شعبہ نشرو اشاعت                                                  0300-8448973



اپنا تبصرہ بھیجیں