عمران خان ، اب آپ گھبرانا شروع کردیں: مریم اورنگزیب

مریم اورنگزیب نے کہا کہ اس نااہل حکومت کی وجہ سے ایک سال کے عرصے میں پاکستان کی معیشت کو 26ارب کا دھچکا لگا ہے۔ انہوں نے وزیر اعظم کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ، “عمران صاحب آپ کے جھوٹ نالائقی اور نالائقی ثابت ہونی نہیں، ہوچکی ہے۔آپ آئی ایم ایف جا نہیں رہے، جاچکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ آپ کی حکومت نے ایک سال میں گیارہ ہزار ارب کے قرضے لئے ہیں۔ سبزیوں اور پھلوں کی قیمتوں میں دوگنا اضافہ ہوا ہے اور ملک میں افراط زر اور بے روزگاری ہے۔
مسلم لیگ ن کے ترجمان کا مزید کہنا ہے کہ بجلی اور گیس کی قیمتوں میں بالترتیب 100 اور 200 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔انہوں نے سرکاری ہسپتالوں میں مفت دوائیں فراہم کرنے والے فارمیسیوں کو بند کرنے پر بھی حکومت کو تنقید کا نشانہ بنایا۔
مریم اورنگزیب نے کہا کہ ترقیاتی شرح 5.8 سے کم ہو کر 2فیصد اور افراط زر کی شرح 3 سے 14 فیصد تک بڑھ گئی ہے۔ فیکٹریاں ، دکانیں اور صنعتیں بند کردی گئیں جس کے نتیجے میں بے روزگاری ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ پشاور میں جو ایک ارب درخت لگنے تھے وہ تاحال لگے نہیں ہیں ۔اورعمران خان نے ایک کروڑ نوکری، پچاس لاکھ گھر کا وعدہ کیا تھا جو ابھی تک پورا نہیں ہوا ۔مریم اورنگزیب نے کہا کہ پشاور میٹرو ابھی تک نہیں بن سکی ، نواز شریف اور شہباز شریف کے دور میں میٹرو، اورنج ٹرین ، بجلی کے منصوبے اور موٹر وےپایہ تکمیل کو پہنچے ۔