یاسر شاہ سنچری تک کس جذبے سے پہنچے؟

پاکستان ٹیم کے فاسٹ بولر عثمان شنواری نے انکشاف کیا ہے کہ انہوں نے یاسر شاہ کو چیلنج کیا تھا کہ وہ آسٹریلیا میں بیٹنگ کرکے دکھائیں۔

کراچی میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خیبرپختونخوا کے بولر عثمان شنواری نے قائداعظم ٹرافی میں بلوچستان کے خلاف میچ کا واقعہ سنایا
انہوں نے واقعے کو دہراتے ہوئے کہا کہ یاسر شاہ میرے خلاف بیٹنگ کرنے کے لیے آئے تو لمبی اننگز کھیلنے کے خواہشمند تھے تو میں ان کے پاس گیا اور کہا کہ میں تمہیں اسی وقت ایک بیٹسمین مانوں گا جب وہ آسٹریلیا میں 150 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گیند بازی کرنے والے بولرز کا سامنا کریں گے اور وکٹ پر کھڑے رہیں گے۔

عثمان شنواری نے کہا کہ میں آج بہت خوش ہوں کیونکہ انہوں نے ایسا کر دکھایا۔

یاد رہے کہ یاسر شاہ نے ایڈیلیڈ ٹیسٹ کے دوران پہلی اننگز میں شاندارسنچری اسکور کی اور ٹیم کی طرف سے ٹاپ اسکورر رہے۔

عثمان شنواری کہتے ہیں کہ ٹیل اینڈرز کی جانب سے اسکور کرنا ان کے لیے بہت اہم ہوتے ہیں
پاکستان ٹیم کی بولنگ پرفارمنس پر بات کرتے ہوئے عثمان شنواری نے کہا کہ بولرز نے صحیح جگہ پر گیند بازی نہیں کی جسی کی وجہ سے انہیں کامیابی حاصل نہیں ہوسکی۔

25 سالہ فاسٹ بولر نے ڈومیسٹک کرکٹ کو سیکھنے کی جگہ قرار دیا جہاں کھلاڑی کھیل کے تمام پہلوؤں کو سیکھ جاتے ہیں۔

عثمان شنواری نے تمام فارمیٹس میں پاکستان ٹیم کی نمائندگی کرنے کا بھی اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میں تمام طرز کی کرکٹ کے لیے ہمیشہ تیار رہتا ہوں۔

اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے فاسٹ بولر کا کہنا تھا کہ وہ تسلسل کے ساتھ ڈومیسٹک کرکٹ کھیل رہے ہیں اور ٹیسٹ کرکٹ کھیلنے کے لیے بھی بھرپور تیار ہیں
جب ان سے ان کی غیر تسلسل کارکردگی سے متعلق سوال کیا گیا تو انہوں نے جواب دیا کہ وہ ہر میچ میں جارحانہ انداز میں بولنگ کرنے کی کوشش کرتے ہیں، تاہم جب کوئی بولر جارحانہ انداز میں بولنگ کرتا ہے تو اسے مار پڑنے کا چانس زیادہ ہوجاتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ میں 4 اوور میں 24 رنز دے کر 2 وکٹیں لینے کی بولنگ فیگرز سے مطمئن نہیں، بلکہ چاہتا ہوں کہ میں میچ فتح گر پرفارمنس دوں، میں اپنا سو فیصد دینے کی کوشش کرتا ہوں چاہے وہ قومی ٹیم ہو یا فرنچائز ٹیم ہو۔

قومی ٹیم پہلی اننگز میں 89 رنز پر 6 وکٹوں سے محروم ہوگئی تھی ایسے میں یاسر شاہ نے پہلے بابر اعظم کے ساتھ اور پھر محمد عباس کے ساتھ مل کر لمبی شراکت داریاں قائم کرکے ٹیم کے خسارے کو کم کیا۔

پاکستان ٹیم ایڈیلیڈ ٹیسٹ میں آسٹریلیا کے 589 رنز کے مقابلے میں 302 رنز بنا کر آل آؤٹ ہوئی اور فالو آن کا شکار ہوگئی کینگروز نے شاہینوں کو فالو آن کروایا اور دوسری اننگز میں بھی تیسرے روز کھیل کے اختتام تک پاکستان کے 39 رنز پر 3 کھلاڑی آؤٹ ہوگئے ہیں۔