سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے قانون و انصاف کی جانب سے عوامی سماعت کا انعقاد

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے قانون و انصاف کی جانب سے پیر 2 دسمبر 2019 کو دوپہر 1.00 تا شام 5.00 بجے تک ہوٹل پی سی (پرل کانٹینینٹل)  میں عوامی سماعت کا انعقاد کیا ہے. اس عوامی سماعت میں آئین کی تین شقوں میں ترامیم کے لئے بل کی تیاری کے لیئے عوام سے ان کی قیمتی رائے طلب کی جائے گی. آئین کی جن 3 شقوں میں ترامیم کے لئے بل تیار کئے جارہے ہیں ان میں(1)ترمیم آرٹیکل 1، 51، 59، 106، 175، 198 اور 218 میں آئین اسلامی جمہوریہ پاکستان کے تحت ساؤتھ پنجاب صوبہ بنانے کے حوالے سےبحث کی جائے گی اور پاکستان میں مزید نئے صوبوں کی ضرورت پر غور کیا جائے گا اور اس میں عوامی رائے لی جائے گی.(2)دوسرے بل کے تحت آئین کے آرٹیکل 51 اور 106 اسلامی جمہوریہ پاکستان کے تحت صوبہ بلوچستان کی قومی اور صوبائی اسمبلیوں کی نشستوں میں اضافے کے حوالے سے بحث کی جائے گی اور اس سلسلے میں صوبے کے آبادی اور خطے جغرافیائی عوامل کو بھی زیر بحث لایا جائے گا جبکہ تیسرے بل میں(3) آئین پاکستان کے آرٹیکل 11 کے تحت چائلڈ لیبر کی عمر کی حد 14 سال سے بڑھا کی 16 سال کرنے کے حوالے سے نہ صرف عوامی رائے طلب کی جائے گی بلکہ اس پر مذکورہ کمیٹی بحث بھی کرائے گی.

اپنا تبصرہ بھیجیں