پاکستان کے دو مشہور صحافی عمر چیمہ اور اعزاز سید پکنک مناتے ہوئے

پاکستان کے دو مشہور صحافیوں عمرچیمہ اور اعزاز سید کی پکنک مناتے ہوئے کچھ تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی ہیں جن میں دونوں کو انتہائی خوشگوار موڈ میں دیکھا جا سکتا ہے ۔عمر چیمہ اور اعزاز سید کا شمار پاکستان کے انویسٹی گیٹیو رپورٹرز میں ہوتا ہے ۔عمر چیمہ 2008 میں ڈینئل پرل جرنلزم فیلوشپ جیت چکے ہیں اور وہ پل کے پہلے ساتھی ہیں جنہیں نیویارک ٹائمز میں کام کرنے کا موقع ملا ۔عمر چیمہ نے لندن اسکول آف اکنامکس میں شیوننگ اسکولر ایم ایس سی  کیا ۔جولائی انیس سو اٹھتر میں پیدا ہونے والے عمر چیمہ سی پی  جے  انٹرنیشنل پریس فریڈم ایوارڈ بھی حاصل کر چکے ہیں ۔یہ بات قابل ذکر ہے کہ چار ستمبر 2010 کو انہیں اغوا کر لیا گیا تھا ان پر زبردست تشدد کیا گیا تھا ان کی مونچھیں اور بھنویں مونڈ دی گئی تھی ۔نیویارک ٹائمز اس حوالے سے لکھا بھی تھا کہ عمرچیمہ پر حملہ کس نے کیا ؟سال 2011میں عمرچیمہ کو ایک غیرملکی یونیورسٹی کی جانب سے فری اسپیچ ایوارڈ بھی دیا گیا ۔ دوسری جانب عمرچیمہ کے ساتھ ساتھ اعزاز سید کا شمار پاکستان کے محنتی انویسٹیگیٹو رپورٹرز میں ہوتا ہے انہوں نے مختلف ٹی وی چینلز اور اخبارات کے لیے عمدہ کام کیا ہے ان کی رپورٹنگ اور کالموں کو ملکی اور غیر ملکی سطح پر سراہا جاتا ہے انہوں نے القاعدہ میں پاکستانی رازوں کے حوالے سے ایک کتاب بھی لکھی ہے جنرل نے ان کی شروع سے یہ کوشش رہی ہے کہ وہ کچھ مختلف اور نیا کر کے دکھائیں ۔


اپنا تبصرہ بھیجیں