ونٹیج کار ریلی کے انعقاد سے دنیا میں پاکستان کا سافٹ امیج اجاگر ہورہا ہے، گورنر سندھ

غیر ملکی سیاحوں کا پاکستان کی طرف بڑھتا ہوا رجحان اس بات کا واضح ثبوت ہے ، میڈیا سے گفتگو
کراچی: گورنرسندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ ونٹیج کار ریلی کا انعقاد دنیا میں پاکستان کے مثبت امیج کو بڑھانے میں مدد گار ثابت ہورہا ہے جبکہ ریلی سے سیاحت کے ساتھ ساتھ دیگر شعبوں کو بھی مزید فروغ مل رہا ہے۔ غیر ملکی سیاحوں کا پاکستان کی طرف بڑھتا ہوا رجحان اس بات کا واضح ثبوت ہے کہ پاکستان میں ثقافتی ، سماجی ، کھیلوں سمیت دیگر مثبت سرگرمیاں اپنے عروج پر ہیں ۔

موجودہ حکومت کی بہتر معاشی پالیسی کی بدولت معیشت میں استحکام پیدا ہوا اور جلد عوام کو اس ضمن میں ریلیف ملنا شروع ہوجائے گا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہیری ٹیج موٹرنگ کلب آف پاکستان کے زیرِ انتظام خیبر سے شروع ہونے والی ونٹیج کار ریلی کے اختتام کے موقع پر گورنر ہاﺅس میں میڈیا کے نمائندگان سے گفتگو کرتے ہوئے کہی۔ ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے گورنرسندھ کا کہنا تھا کہ ٹماٹر کی قیمتوں میں اضافہ اس کی فصل میں تاخیر کے باعث ہوا، اب جب کہ فصل تیار ہوگئی ہے تو ٹماٹروں کی قیمتوں میں کمی دیکھی جارہی ہے۔

دھرنے کے بارے میں کئے گئے سوال پر گورنرسندھ کا کہناتھا کہ دھرنا اپنے منطقی انجام کو پہنچ گیا ہے۔ لوگوں نے مولانا صاحب کے تمام پلان مسترد کرئےے، حکومت کو گھر بیٹھانے کے بجائے مولانا صاحب اب خود گھر جاکر بیٹھ جائیں۔ فارن فنڈنگ کیس کے بارے میں کئے گئے سوال پر گورنرسندھ کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی ملک کی وہ واحد جماعت ہے جس کے ہر سال اکاﺅنٹس کا آڈٹ ہوتا ہے۔ اس قبل گورنر سندھ سے ہیری ٹیج موٹرنگ کلب آف پاکستان کے صدر محمد خان نے گوررنر ہاﺅس میں ملاقات کی۔ اس موقع پر کلب کے ممبر توقیر سلطان نے ریلی کے بارے میں بتاتے ہوئے کہا کہ پچھلے 30 سالوں سے اس ریلی کا انعقاد کیا جا رہا ہے جبکہ پچھلے 10 سالوں سے باقاعدہ ہر سال اس ریلی کا انعقاد کیا جارہا ہے۔ ریلی ایک سال کراچی سے شروع ہو کر خیبر پر ختم ہوتی ہے۔ جبکہ اگلے سال خیبر سے شروع ہو کر کراچی پر اختتام پزیر ہوتی ہے۔ اس سال ریلی میں ملائیشیا، جرمنی ، کوریا، چائنا اور دیگر ممالک سے تعلق رکھنے والے افراد نے بھی حصہ لیا۔