گورنر سندھ سے زیر تربیت 27 ویں جونیئرڈپلومیٹک کورس کے غیر ملکی سفارتکاروں کے وفد کی ملاقات

کراچی :  گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ بین الاقوامی تعلقات کے فروغ اور باہمی رابطوں کو مضبوط بنانے میں سفارتکاروں کا کلیدی کردار ہوتا ہے۔ سفارتی وفود کے تبادلوں سے ایک دوسرے کی ثقافت، رسم و رواج، سیاسی و سماجی صورتحال، سیاحت اور دیگر معلومات حاصل کرنے کے بہترین مواقع میسر آتے ہیں۔  ان خیالات کا اظہار انہوں نے فارن سروسز اکیڈمی اسلام آباد میں زیر تربیت 27ویں جونیئرڈپلومیٹک کورس کے 14 دوست ممالک سے تعلق رکھنے والے غیر ملکی سفارتکاروں کے وفد سے گورنر ہاﺅس میں گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ گورنر سندھ نے کہا کہ پاکستان خطے سمیت دیگر ممالک سے اقتصادی تعاون بڑھانے کا خواہش مند ہے ۔ پاکستان نے دنیا کے امن کے لئے تقریباً 70 ہزار افراد قربانیاں دیں اور جس کے ساتھ ساتھ کئی بلین ڈالرز کا نقصان بھی اٹھانا پڑا۔

کشمیر میں بھارت کی ریاستی جبرو تشدد کو 150 دن سے زائد کا عرصہ گزر چکا ہے، مسئلہ کشمیر کے منصفانہ ، غیر جانبدارانہ اور کشمیریوں کی امنگوں کے مطابق حل کرنا وقت کی اہم ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ شہرِ کراچی ملک کا معاشی و تجارتی حب ہے یہاں غیر ملکی سرمایہ کاری کے لئے وافر مواقع موجود ہیں جبکہ سی پیک کی تکمیل کے بعد گوادر شہر بھی بین الاقوامی تجارتی منڈیوں میں سرمایہ کاری کے حوالے سے اہمیت کا حامل ہوگا ۔ سی پیک سمیت دیگر منصوبوں میں بھی سرمایہ کاری کی جاسکتی ہے موجودہ حکومت غیر ملکی سرمایہ کاروں کو آسان سفری سہولت کے ساتھ ساتھ دیگر مراعات بھی فراہم کررہی ہے جبکہ دیگر ممالک بھی اس منصوبے سے بھرپور فائدہ اٹھا سکیں گے جس سے پاکستان کے زرمبادلہ میں اضافہ یقینی ہے۔ بعدازاں غیر ملکی سفارتکاروں کے وفد نے قائد اعظم محمد علی جناح ؒ کے زیرِ استعمال اشیاءاور کمروں کا بھی دورہ کیا۔