گورنر سندھ سے 16 ممالک کے غیر ملکی ڈیفنس اٹیچیزکے وفد کی گورنر ہاﺅس میں ملاقات

کراچی: گورنر سندھ عمران اسماعیل نے کہا کہ دور جدید میں سفارتخانوں کی اہمیت اور بین الاقوامی تعلقات کے فروغ میں سفارت کاروں کا کلیدی کردار ہوتا ہے جبکہ کامیاب سفارت کاری سے ممالک کے مشترکہ مفادات کے تحفظ کو یقینی بنانے میں بھی مدد ملتی ہے۔  ان خیالات کا اظہار انہوں نے 16 ممالک کے غیر ملکی ڈیفنس اٹیچیز (Defence Attaches) اور سفارتی عملے پر مشتمل وفد سے گورنر ہاﺅس میں ملاقات کے دوران کیا۔ وفد میں امریکہ، کینیڈا، چیک ریپبلک ، بنگلہ دیش ، جرمنی، اٹلی، انڈونیشیا ، جاپان، جورڈن ، ملائیشیا، میانمار، پولینڈ، سعودی عرب، سوڈان، تھائی لینڈ اور مصر کے سفارتکار شامل تھے۔ گورنر سندھ نے مزید کہا کہ سرمایہ کاری ، مشترکہ منصوبے اور دو طرفہ تجارت کے فروغ میں بھی سفارت کاری اہم ثابت ہوتی ہے۔

گورنر سندھ نے کہا کہ پاکستان خطے سمیت دیگر ممالک سے اقتصادی تعاون بڑھانے کا خواہش مند ہے کیونکہ پاکستان اور ایشائی سمیت دیگر ممالک کے مابین اقتصادی تعاون اور باہمی تجارت کی بہت زیادہ گنجائش موجود ہے، سفارتی وفود کے تبادلوں سے سرمایہ کاری میں بھی نمایاں اضافہ کیا جاسکتا ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ موجودہ حکومت کے دور میں معیشت کے ہر شعبہ میں ترقی ہورہی ہے ، جغرافیائی اہمیت کے باعث نہ صرف جنوبی ایشیا بلکہ پوری دنیا کے امن کے لئے پاکستان کا کردار نہایت اہم رہا ہے۔ گورنر سندھ نے کہا کہ سی پیک سے پاکستان میں ترقی و خوشحالی کے نئے دور کا آغاز ہورہاہے جبکہ سی پیک منصوبے میں ہمسایہ ممالک کے علاوہ دیگر ممالک بھی سرمایہ کاری میں بھرپور دلچسپی رکھتے ہیں۔ بعد ازں ڈیفنس اٹیچیز کے وفد نے قائد اعظم محمد علی جناح ؒکے زیرِ استعمال اشیاءاور کمروںکا بھی دورہ کیا۔