عنقریب حقائق منظر عام پر لاؤں ہوگی، اپنا اور اپنے بچے کا حق حاصل کرنے کی کوشش کر رہی ہوں : پلوشہ خان

کراچی : پاکستان پیپلزپارٹی کی رہنما اور سابقہ معاون خصوصی پالوشہ خان نے سابق ڈی جی آئی ایس آئی جنرل(ر)ظہیر الاسلام سے نکاح پر فی الحال خاموشی اختیار کرلی ہے ذرائع کے مطابق گزشتہ دنوں سوشل میڈیا پر سابق ڈی جی آئی ایس آئی جنرل(ر)ظہیر الاسلام کے ساتھ خفیہ شادی کی خبریں آنے کے بعد جہاں ایک طرف پورے ملک میں عوام مزید تفصیلات جاننے کیلیے کوشاں ہیں وہاں دوسری جانب بہت زیادہ دباو کےبعد پلوشہ خان کی جانب سے فی الحال خاموشی اختیار کرلی ہے جیوے پاکستان سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے پیپلزپارٹی کی رہنما پلوشہ خان نے کہا کہ اس مسئلے پر میں ابھی بات نہیں کرنا چاہتی ۔پلوشہ خان نے کہا کہ مجھ پر فی الحال کوئی دباؤ نہیں ہے۔

عنقریب میں تمام حقائق منظر عام پر لاوں گی پلوشہ خان کا مزید کہنا تھا کہ میں صرف اپنا اور اپنے بچے کا حق حاصل کرنے کی کوشش کر رہی ہو ں واضح کہ گزشتہ دنوں پلوشہ خان اور سابق ڈی جی آئی ایس آئی کے ظہیر الاسلام کے خفیہ نکاح کی خبریں منظر عام پر آنے کے بعد پورے ملک میں کھلبلی مچ گئی تھی اطلاعات کےمطابق پلوشہ خان کا کہنا تھا کہ میں نے بہت صبر کیا لیکن جب حالات حد سے بڑھ گئے تو میں نے اپنا حق حاصل کرنے کا فیصلہ کیا ہے میں جب خفیہ نکاح اور بچے کی ولدیت کا اعلان کرنے کہا تو انکے گھر سے مجھے تشدد کر گھر سے نکال دیا گیا ۔