فوڈ ڈپلومیسی مختلف اقوام کے درمیان قربت بڑھانے کا مؤثر زریعہ ہے: گورنرسندھ 

 حال ہی میں احساس پروگرم کے تحت غریب اور نادار لوگوں کے لیے دستر خوان کا سلسلہ شروع کیا۔ گورنرہاﺅس میں فوڈ فیسٹول کی تقریب سے خطاب
کراچی :    گورنرسندھ عمران اسماعیل نے کہا ہے کہ وزیراعظم عمران خان ایک وژن رکھنے والے لیڈر ہیں اور ان کو عوام کے تمام مسائل کا ادراک ہے اور وہ خلوص نیت سے ان کے حل کے لیے کوشاں ہیں اس ضمن میں انہوںنے حال ہی میں غریب اور نادار لوگوں کے لیے دستر خوان کا سلسلہ شروع کیا ہے جو کہ پی ٹی آئی حکومت کی ترجیحات اور خواہشات کی عکاسی کرتا ہے اور اس پروگرام کا مقصد یہ ہے کہ کوئی بھی انسان بھوکا نہ سوئے اور اس کو مکمل غذائیت سے بھرپور خوراک میسر آسکے کیونکہ پاکستان میں بچوں کی اکثریت غذائی قلت کا شکار ہے اور حکومت نے بیڑا اٹھایا ہے کہ اس غذائی قلت کو دور کرکے ایک صحت مند معاشرہ تشکیل دیا جائے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے گورنرہاﺅس میں فوڈ فیسٹول کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔

گورنرسندھ نے مزید کہا کہ میں صدر کراچی ایڈیٹرز کلب مبشر میر ،سیکرٹری جنرل منظر نقوی ، ایڈیٹرز کلب اور ”فوڈ ایکسی لینس ایوارڈز“ کی ٹیم کے دیگرارکان کو مبارکباد پیش کرتا ہوں کہ انہوں نے ”دوسرے فوڈ ایکسی لینس ایوارڈز“ کا انعقاد گورنرہاﺅس میں کیا ۔ ان ایوارڈ ز کے انعقاد سے ایسے لوگوں کی ہمت افزائی ہوگی جو اپنے اداروں اور ہوٹلوں میں صحت کے اصولوں کے مطابق معیاری غذائی اشیاءمہیا کرتے ہیں ۔غذا میں منافع کی خاطر ملاوٹ کرنا ایک سنگین جرم ہے۔اس ضمن میں قوانین موجود ہیں ،جنہیں مزید بہتر بنانے کی کوشش کی جارہی ہے۔موجودہ حکومت عوام کو بہترین غذا کی فراہم کرنے والے اداروں سے تعاون کررہی ہے اور انہیں مطلوبہ سہولتیں بھی فراہم کررہی ہے۔

بہترین کھانوں سے ہم اپنی سیاحت کو بھی فروغ دے سکتے ہیں اور یہ ہماری حکومت کی ترجیحات میں شامل ہے۔گورنر سندھ نے کہا کہ فوڈ ڈپلومیسی مختلف اقوام میں قربت بڑھانے کا موثر زریعہ ہے، پاکستانی کھانوں کی دنیا بھر میں بہت مانگ ہے ضرورت اس بات کی ہے کہ نجی شعبہ دنیا میں پاکستانی ڈشیز کو متعارف کروانے کے لیے مزید اقدامات کرئے۔ موجودہ حکومت نے اس ملک میں تبدیلی لانے کاوعدہ کیا ہے اور ہم اس وعدے پر مضبوطی کے ساتھ قائم ہیں۔فوڈ ایکسی لینس ایوارڈز جیسی تقریبات یہ بات ثابت کررہی ہیں کہ شہر میں سماجی تقریبات اپنے عروج پر ہیں اور ماضی میں کراچی کے امن و امان حوالے سے لوگوں کے جو خدشات تھے وہ زائل ہوچکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حکومت نے لوگوں کو ان کے پیروں پر کھڑا کرنے کے لئے بلا سو د قرضے کی فراہمی بھی شروع کی ہے تاکہ نوجوان انٹرپینیور اپنا کوئی کاروبار شروع کرکے اپنے گھرانے کی کفالت کر سکیں یہ ایک خوش آئند اور زبردست پروگرام ہے جس ہم اپنی  آئندہ آنے والی نسل کی قسمت کو مزید بہتر بناسکتے ہیں۔