نواز شریف خیریت سے لندن پہنچ گئے

مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے کہا ہے کہ نواز شریف خیریت سے لندن پہنچ گئے ہیں، دعائیں کرنے پر برطانیہ میں بسنے والے لاکھوں پاکستانیوں کا شکر گزار ہوں۔

ایون فیلڈ اپارٹمنٹس کے باہر میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سفر کے دوران نواز شریف کو طبی امداد دی گئی، کل نواز شریف کا ڈاکٹر سے پہلا اپائنٹمنٹ ہے-
قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور مسلم لیگ ن کے صدر شہباز شریف نے کہا ہے کہ نواز شریف خیریت سے لندن پہنچ گئے ہیں، دعائیں کرنے پر برطانیہ میں بسنے والے لاکھوں پاکستانیوں کا شکر گزار ہوں۔

ایون فیلڈ اپارٹمنٹس کے باہر میڈیا سے غیر رسمی گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سفر کے دوران نواز شریف کو طبی امداد دی گئی، کل نواز شریف کا ڈاکٹر سے پہلا اپائنٹمنٹ

شہباز شریف کا کہنا تھا کہ دعا کریں کہ نواز شریف کا علاج مکمل ہو اور وہ وطن واپس جائیں۔

اس سے قبل نواز شریف کے صاحبزادے حسین نواز نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے والد کے پلیٹ لیٹس کم ہونے پر سلو پوائزن کے خدشے کا اظہار کیا تھا، ان کا کہنا تھا کہ معاملے کی تحقیقات ہونی چاہیے۔

انہوں نے کہا تھا کہ والدہ کے علاج اور بیماری کو بھی سیاسی بنانے کی کوشش کی گئی تھی۔ اس وقت سیاسی بات نہیں کرنا چاہتا، سب سے اہم چیز والد کی صحت یابی ہے-

سابق وزیر اعظم میاں نواز شریف لندن میں ایون فیلڈ اپارٹمنٹس پہنچ گئے، شہباز شریف بھی ان کے ہمراہ ہیں۔

نواز شریف کی ایون فیلڈ اپارٹمنٹس آمد پر بڑی تعداد میں موجود مسلم لیگ ن کے کارکنوں نے استقبال کیا۔

ذرائع کے مطابق لندن میں نوازشریف اپنے صاحبزادے حسن نواز کے گھر پر خصوصی طور پر تیار کردہ کمرے میں آج آرام کریں گے جبکہ ان کا طبی معائنہ بدھ کی صبح ہارلے اسٹریٹ کلینک میں ہوگا۔

ذرائع کے مطابق ہارلے اسٹریٹ کلینک میں پلیٹ لیٹس کے ماہرین نواز شریف کا معائنہ کریں گے ، اس دوران امریکا کے طبی ماہرین سے بھی مشاورت کی جائے گی، طبیعت میں بہتری نہ آنے کی صورت میں انہیں فوری طور پر امریکا بھی منتقل کیا جاسکتا ہے۔

نواز شریف قطری ایئر بس میں لاہور سے براستہ دوحا لندن کے لیے آج صبح تقریباً ساڑھے 10 بجے روانہ ہوئے تھے