قتل کیس کے مجرم محمد ادریس کی سزا کے خلاف اپیل

کراچی/ سندھ ہائیکورٹ  قتل کیس کے مجرم محمد ادریس کی سزا کے خلاف اپیل  سندھ ہائیکورٹ نے سزا کے خلاف اپیل پر فیصلہ سنادیا  سندھ ہائیکورٹ نے ٹرائل کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے ملزم محمد ادریس کو بری کردیا،، محمد ادریس نے میرے بیٹے عبداللہ کو  2014 میں قتل کیا تھا، مدعی مقدمہ  ٹرائل کورٹ نے جرم ثابت ہونے پر محمد ادریس کو سزائے موت کی سزا سنائی تھی ،، ملزم کے خلاف مقدمہ تھانہ قائد آباد میں درج ہے ،، قتل کیس کے مجرم محمد ادریس کی سزا کے خلاف اپیل سندھ ہائیکورٹ نے منظور کرلی عدالت نے ٹرائل کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے ملزم محمد ادریس کو بری کردیا،
2014 میں عبدالله نامی شخص کے قتل کے الزام میں ٹرائل کورٹ سے سزائے موت پانے والے مجرم محمد ادریس کی سزا کے خلاف سندھ ہائی کورٹ میں دائر اپیل پر عدالت نے فیصلہ سنا دیا، عدالت نے ٹرائل کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے ملزم محمد ادریس کو بری کردیا، سندھ ہائی کورٹ نے فیصلہ مجرم کے خلاف ثبوت اور عدم شواہد کی بنا پر سنایا، مجرم محمد ادریس کے خلاف  تھانہ قائد آباد میں مقدمہ درج کیا گیا تھا،

اپنا تبصرہ بھیجیں