ننھا محمود الرحمن ہر گھر کی داستان

” ننھا محمود الرحمن ہر گھر کی داستان  ” اپنے دادا اور ہم سب کے قائد مولانا فضل الرحمن صاحب کی  آغوش میں کھڑے نھنے منے ” محمود الرحمن ” آزادی مارچ کے اسٹیج سے  ہم سب کے  قائد کے نقش قدم پر چلتے ہوئے ان کا دست و بازو بننے کیلئے ان کی آغوش میں کھڑے ہیں ۔ مفکر اسلام حضرت مولانا مفتی محمود رح کے بعد ان کے خاندان کی تیسری پشت بھی اب تک اسی جماعت سے یکسوئی کسیاتھ وابستہ ہے۔ جس جماعت کی آبیاری کرتے وہ داعی اجل کو لبیک کہہ گئے تھے ۔ اسی جذبہ استقامت نے مفکر اسلام حضرت مولانا مفتی محمود رح سے  قائد جمعیت مولانا فضل الرحمن تک اور پھر مفتی اسعد محمود سے محمود الرحمن تک چار پشتوں میں اس نظریاتی وابستگی کو زندہ جاوید رکھا ہوا ۔



اپنا تبصرہ بھیجیں