کرتارپور راہداری کھولنا حکومت پاکستان کی جانب سے اچھا اقدام ہے

اے ٹی سی/عامر خان میڈیا ٹاک

کرتارپور راہداری کھولنا حکومت پاکستان کی جانب سے اچھا اقدام ہے

اس اقدام سے سکھ یاتری اپنے مقدس مقام کی زیارت کر سکیں گے

اسی طرح پاکستانیوں کے بھی عزیر و قارب بھارت میں موجود ہیں حکومت پاکستان انکے لئے بھی بھارت جانے پر آسانیاں پیدا کرے

سکھ یاتریوں کے پاکستان آنے پر ملکی سلامتی کو کوئی خطرہ نہیں

ہماری ملکی ایجنسیز قانون نافز کرنے والے ادارے یاتریوں کی مکمل نقل و حرکت پر نظر رکھیں گے

بھارت نے جو کشمیر میں ظلم وستم مجا رکھا ہے اقوام متحدہ کو اس پر ایکشن لینا چاہیے

پاکستانی حکومت اور عوام ہر وقت کشمیر اور کشمیری عوام کے ساتھ کھڑے ہیں

مولانا فضل الرحمان ایک زہین اور ہمارے لئے قابل احترام ہیں

لگتا ہے مولانا فضل الرحمن آزادی مارچ کے مقاصد حاصل کر رہے

احتساب کا عمل سب کے لئے یکساں ہونا چاہیے

جس کسی نے بھی غلط کام کیا ہو اس کے خلاف ایکشن ہونا چاہیے

یہ تاثر نہ جائے کہ حکومت یا حکومتی اتحادیوں کو ریلیف مل رہا ہے اور اپوزیشن کے خلاف زیادتی ہورہی ہے

دھرنوں کے باعث حکومت کی تبدیلی کی روایت پڑنا پاکستان کے حق میں ہرگز بہتر نہیں ہوگی

مولانا فضل الرحمان دھرنے سے متعلق حکومتی کمیٹی کے مابین ہونے والے معاہدے کی پاسداری کررہے ہیں جو قابل ستائش ہے

حکومت اور اپوزیشن کو دھرنے کا حل مذاکرات کے ذریعے حل کرنا چاہیے

ہر بار الیکشن کے نظام اور دھاندلی پر اعتراضات اٹھائے جاتے ہیں

اب وقت آگیا ہے الیکشن کے نظام میں اصلاحات لانے کی ضرورت ہے

مردم شماری اور حلقہ بندیوں میں جو زیادتی ہوئی ہے اسکا بھی ازالہ کیا جائے

ہماری مسلح افواج سرحدوں کی محافظ ہے،اس وقت ہماری فوج اندرونی اور بیرونی چیلنجز کا سامنا کر رہی ہے